Friday , July 21 2017
Home / شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

ڈاکٹر سید خورشید علی ساجدؔ غزل ( طنز و مزاحیہ ) خود کو یاں چُور چُور کرنا ہے دشت و دریا عبور کرنا ہے کام نیکی کے روز و شب کرکے اپنے قبضہ میں حور کرنا ہے جامِ اُلفت چڑھا چڑھا کر یاں ایک نشہ ، سرور کرنا ہے دے …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

علامہ اسرار جامعیؔ غازی…! دنیا یہ جانتی ہے کیا شان ہے ہماری بعد ازاں جہاد جیسے میداں سے جائیں غازی پہلے نمازیوں کی تھی فوج مسجدوں میں ماہِ صیام رخصت ، رخصت ہوئے نمازی …………………………… مخلصؔ حیدرآبادی فیضانِ عید! شعورِ کلمۂ طیّب کو جگمگانا ہے جہانِ کفر کی ہر تیرگی …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ؔ (رائچور) بھوک روتی ہے …! کِھید ہے ہم کو اب بھی ساشن پر کالے دھن کا ہے ظُلم نِردھن پر لوگ تالی بجاتے ہیں لیکن بھوک روتی ہے آج بھاشن پر ……………………… ڈاکٹر سید مظہرؔ عباس رضوی روٹھی بیوی سے خطاب (عبدالحمید عدم سے معذرت کے ساتھ) …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ؔ (رائچور) احساس …! آج احساس سب کو ہوتا ہے مودی صاحب ! غریب روتا ہے کالے دھن کے طفیل میں اب بھی چین سے ہر امیر سوتا ہے ……………………… محشر لکھنوی لب پہ آتی ہے دعا!! لب پہ آتی ہے دعا بن کے تمنا میری زندگی بم …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ؔ (رائچور) کالا دھن …! کالا دھن والے سب مزے میں ہیں جو نہیں تھے وہ اب مزے میں ہیں سارے دھنوان اصل میں واجدؔ نِر دھنوں کے سبب مزے میں ہیں ……………………… شادابؔ بے دھڑک مدراسی غزل ِ بے دھڑک محفوظ میوزیم میں بھی ورثے نہیں رہے …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

  انورؔ مسعود گرانی کی گونج! تیور دکاندار کے شعلے سے کم نہ تھے لہجے میں گونجتی تھی گرانی غرور کی گاہک سے کہہ رہا تھا ذرا آئِنہ تو دیکھ کس مُنہ سے دال مانگ رہا ہے مسور کی …………………………… وحید واجد ؔ (رائچور) شیخ چلی کا خواب …! نوٹ …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ایم اے رائچور مایوسی …! ایس بی کھاتے میں رقم ہے میری رقم باکار ہے نہیں پھر بھی روز مایوس لوٹ آتا ہوں کِیو جو شیطان کی ہے دُم جیسی ……………………… نسیم ٹیکمگڑھی مہمان نوازی…! بچوں کی دھماچوکڑی اﷲ رے توبہ مہمان نوازی کوئی آسان نہیں ہے دو …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ایم اے رائچور جھوٹوں کا راج…! وہ دکھاتے ہیں خواب نوٹوں کا دیکھتے خود ہیں خواب ووٹوں کا جھوٹ پر جھوٹ، جھوٹ کی جے جے آج ہے راج صرف جھوٹوں کا ……………………… نسیم ٹیکمگڑھی زمانے سے آگے …! آگے نکل گئیں ہیں زمانے سے عورتیں کب تک رہیں …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجد ایم اے رائچور اے ٹی ایم …! پھر سے ناکام لوٹا بے چارہ اس کے چہرہ پہ تھے بجے بارہ رونی صورت تھی ! پُوچھا تو بولا اے ٹی ایم اور بینک نے مارا ……………………… نسیم ٹیکمگڑھی نرس …! مہینہ بھر جو اُنھیں دیکھا پٹّیاں باندھے تو پوچھا …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شاداب بے دھڑک مدراسی ہنسنے کی مشق! دامانِ غم کو خون سے دھونا پڑا مجھے اشکوں کے موتیوں کو پرونا پڑا مجھے میری ہنسی میں سب یونہی شامل نہیں ہوئے ہنسنے کے مشق کے لئے رونا پڑا مجھے ……………………… احمدؔ قاسمی غزل (مزاحیہ) لمحہ لمحہ عذاب گرمی کا کچھ نہ …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شاہدؔ عدیلی تُک بندی…! اب کہاں شعر میں وہ غالبؔ و اقباؔل کا رنگ یا تو تُک بندی ہے یا قافیہ پیمائی ہے نام کے ہجّے کرو یا یہ بتادو کہ غزل خود ہی لکھی ہے کہ اُستاد سے لکھوائی ہے ……………………… خاص بات …! ٭  کچھ لوگ اپنے پالتو …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

انور ؔمسعود یادش بخیر! گذرا ہوں اُس گلی سے تو پھر یاد آگیا اُس کا وہ اِلتفات عجب اِلتفات تھا رنگین ہوگیا تھا بہت ہی معاملہ پھینکا جب اُس نے پھول تو گملا بھی ساتھ تھا ……………………… شاہدؔ عدیلی کم بخت …! وہ پڑھ کے پھونکتی جاتی ہے جسم پر …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شاہدؔ عدیلی نہیں ہوگا…! کوئی لیمو نہیں ہوگا ، کوئی گنڈا نہیں ہوگا کبھی پھر جعلسازوں کا کوئی چرچا نہیں ہوگا میاں انسان کا ایماں اگر مضبوط ہوجائے کوئی عامل نہیں ہوگا کوئی ’’بابا‘‘ نہیں ہوگا ……………………… سُکھی گھرانے کا فارمولہ بیوی: دیکھو نہ، ہمارے پڑوسی نے 50 انچ کا …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

شعیب علی فیصل رفتار سست تھی …! آج کالج مجھ کو آنے اس لئے دیر ہوئی نوجواں اک میرا پیچھا کررہا تھا اُس گھڑی گھورکر ٹیچر نے لڑکی سے کہا ’’پھر دیر کیوں؟‘‘ یہ کہا ’’رفتار اُس کی تو بہت ہی سست تھی‘‘ ……………………… مجھکو کبھی دیکھا…! موذن نے کہا …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

ڈاکٹر خواجہ فریدالدین صادقؔ مزاحیہ غزل قصے پرانے چھیڑو نکّو پیچھے پلٹ کو دیکھو نکّو جو کرنا ہے کرلو جلدی خالی مجھ کو گھورو نکّو خوامخواہ کے جوتے کھائیں گے اُلٹا پُلٹا سوچو نکّو باجا تمہارا بج جائے گا گھر میں سالا رکھو نکّو لاٹھی اپنے پاس ہے بس ہے …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

فرید سحرؔ ایسی تیسی …! شان جھوٹی ہی دکھاتے ہیں بڑی شان سے ہم شان نقلی ہو تو اس شان کی ایسی تیسی بنا ہیلمٹ کے مجھے روک لیا ظالم نے کردیا اس نے جو چالان کی ایسی تیسی کوئی کرتا نہیں مہمان کی عزت یارو لوگ اب کرتے ہیں …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

انورؔ مسعود حجام سے ایک علم دوست کا التماس جہاں میں دھوم مچی ہے تری مہارت کی تْجھی کو ڈھونڈ رہا تھا میں ایک مدت سے کچھ اس ہنر سے بنا آج تو قلم میری جسے دوات بھی کہہ لیں بڑی سہولت سے …………………………… محمد ظفراللہ خاں ظفر ؔ ’’میں …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

وحید واجدؔ (رائچور) خیریت نامہ خیریت نامہ لکھا ہے اور باقی خیریت! حادثوں پر حادثہ ہے اور باقی خیریت! بھیڑ میں مرڈر ہوا ہے اور باقی خیریت! پھر بھی قابل بچ گیا ہے اور باقی خیریت! شہر میں دنگا مچا ہے اور باقی خیریت! رات دن کرفیو لگا ہے اور …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

لفظی اُلٹ پھیر…! ٭  جوڑوں کا درد کیا ہے؟ یہ ان بیچارے جوڑوں سے پوچھئے  جو کل ڈیٹ پر نہیں جاسکے۔ ابن القمرین ۔ مکتھل ……………………… عورت کی طاقت ٭  ایک خاتون خریداری کرنے شاپنگ مال میں گئی۔ کیش کاؤنٹر پر ادائیگی کرنے کے لئے اس نے پرس کھولا تو …

Read More »

شیشہ و تیشہ

شیشہ و تیشہ

انورؔ مسعود ہر چند کہیں کہ ہے نہیں ہے اِک اسم ہے کہ جس کا مسمی کہیں نہیں ہر گوشہ ہم نے دیکھ لیا ہے اسپیس کا ڈھونڈا اُسے بہت ہے پہ عنقا نہیں مِلا ڈیلینگ کلرک ہوگا پرندوں کے دیس کا …………………………… شیخ احمد اظہر (یاقوت پورہ ) مزاحیہ …

Read More »
TOPPOPULARRECENT