Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / آئندہ سال سے عزیزیہ زمرہ کے تمام عازمین کو رباط میں قیام کی مساعی

آئندہ سال سے عزیزیہ زمرہ کے تمام عازمین کو رباط میں قیام کی مساعی

ناظر رباط حسین محمد الشریف کا تیقن، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کا بیان
حیدرآباد۔/13 مئی، ( سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ آئندہ سال سے سابق ریاست حیدرآباد کے عزیزیہ زمرہ کے تمام عازمین کو رباط میں قیام کی سہولت فراہم کرنے کی مساعی کی جارہی ہے۔ ناظر رباط حسین محمد الشریف نے اس سلسلہ میں اقدامات کرنے کا تیقن دیا ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر آج حیدرآبادی رباط میں قیام کے سلسلہ میں منعقدہ قرعہ اندازی تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ عازمین حج کی خدمت کرنے والوں کو اللہ تعالیٰ حج کے برابر ثواب عطا فرماتا ہے اسی جذبہ کے تحت چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ عازمین حج کی خدمت پر خصوصی توجہ مرکوز کررہے ہیں۔ تلنگانہ حج کمیٹی کو بہتر انتظامات کے سلسلہ میں 3 کروڑ روپئے جاری کئے گئے جبکہ متحدہ آندھرا پردیش میں حج کمیٹی کا بجٹ صرف دیڑھ کروڑ تھا۔ انہوں نے کہا کہ حج کمیٹی کی جانب سے ہر سال انتظامات میں بہتری پیدا ہورہی ہے جس کا سہرا اسپیشل آفیسر پروفیسر ایس اے شکور کے سر جاتا ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ نظام حیدرآباد جو رعایا پرور اور انصاف پسند حکمراں تھے انہوں نے مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں رباطیں تعمیر کی تھیں۔ آج ان رباطوں میں ناظر حسین شریف بہتر انتظامات کررہے ہیں۔ انہوں نے ناظر رباط اور اوقافی کمیٹی نظام کی ستائش کی اور کہا کہ بہتر تال میل کے ذریعہ دونوں نے عازمین کی خدمت کا فیصلہ کیا ہے۔ محمد محمود علی نے کہا کہ آئندہ سال سے رباط میں قیام کرنے والے عازمین کی تعداد میں اضافہ کیا جائے گا۔ انہوں نے چیف منسٹر کی اقلیت دوستی کی ستائش کرتے ہوئے کہا کہ کے چندر شیکھر راؤ اپنی زندگی میں اقلیتوں کی تعلیمی اور معاشی ترقی دیکھنا چاہتے ہیں ۔ انہوں نے صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم سے امیدیں وابستہ کیں کہ وہ بورڈکی کارکردگی کو بہتر بناتے ہوئے ریاست میں قیمتی اوقافی جائیدادوں کا تحفظ کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اوقاف کی آمدنی میں اضافہ کے ذریعہ مسلمانوں کی بھلائی کے اقدامات کئے جاسکتے ہیں۔ وقف بورڈ کے کرایہ داروں اور عام مسلمانوں کو اس سلسلہ میں حکومت اور بورڈ سے تعاون کرنا چاہیئے۔انہوں نے کہا کہ صدرنشین وقف بورڈ نے کارکردگی کی اچھی شروعات کی ہے لیکن ابھی بہت کچھ کرنا ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل کی ستائش کی اورکہا کہ حکومت کی اسکیمات پر موثر عمل آوری کیلئے وہ دن رات کام کررہے ہیں۔ محمود علی نے کہا کہ چیف منسٹر کے مشیر کی حیثیت سے اے کے خاں کا تقرر خوش آئند ہے۔ اس سے مسلم مسائل کو چیف منسٹر کے پاس پیش کرنے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے اسپیشل آفیسر حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور کی ستائش کی اور کہا کہ گزشتہ تین برسوں سے وہ عازمین کیلئے بہتر خدمات انجام دے رہے ہیں۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے ناظر رباط حسین شریف کی ستائش کی اورکہا کہ جائیداد کا تحفظ کرتے ہوئے اسے بہتر استعمال میں لانا ان کے والد کا کارنامہ ہے جسے انہوں نے جاری رکھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کو عوام چھوٹے نظام کہہ کر پکارتے ہیں کیونکہ وہ بھی نظام حیدرآباد کی طرح رعایا پرور ہیں۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ اوقاف کمیٹی اور ناظر رباط کے درمیان بعض غلط فہمیاں ختم ہوچکی ہیں اور اس مرتبہ عازمین حج کیلئے کوئی دشواریاں نہیں ہوں گی۔ انہوں نے کہا کہ رباط میں منتخب عازمین کو دوسری قسط کی ادائیگی کے وقت رہائشی رقم کو منہا کرلینا چاہیئے۔ اوقاف کمیٹی کے ٹرسٹی ابوالفیض خاں نے بتایا کہ مدینہ منورہ میں نظام کی 3 عمارتیں توسیع میں حاصل کرلی گئی ہیں۔ اوقاف کمیٹی اس بات کی کوشش کررہی ہے کہ 3 عمارتوں کے عوض ایک بڑی عمارت حاصل کرلی جائے تاکہ مدینہ منورہ میں بھی عازمین کو قیام کی سہولت فراہم کی جاسکے۔
مزید تفصیلات فون نمبر 9393420909 پر ربط کریں۔

TOPPOPULARRECENT