Tuesday , September 26 2017
Home / شہر کی خبریں / آبپاشی پراجکٹس پر کانگریس کا جامع معلوماتی پاور پوائنٹ پریزنٹیشن

آبپاشی پراجکٹس پر کانگریس کا جامع معلوماتی پاور پوائنٹ پریزنٹیشن

کے سی آر کا جھوٹ کا پردہ فاش کرنے کا عزم ، کیپٹن اتم کمار صدر تلنگانہ پی سی سی
حیدرآباد ۔ 7 ۔ اپریل : ( سیاست نیوز ) : صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ کانگریس پارٹی جامع معلومات پر مشتمل آبپاشی پراجکٹس پر پاور پوائنٹ پریزنٹیشن پیش کرتے ہوئے چیف منسٹر کے سی آر کے خوبصورت جھوٹ کا پردہ فاش کرے گی ۔ آج گاندھی بھون میں کانگریس کے سینئیر قائدین کانگریس کے رکن پارلیمنٹ مسٹر جی سیکھندر ریڈی ، سابق وزراء پنالہ لکشمیا ، جیون ریڈی ، سبیتا اندرا ریڈی ، سدرشن ریڈی اے آئی سی سی ترجمان ، مدھوگوڑ یشکی ٹی پی سی سی کے ترجمان اعلیٰ شرون کمار کانگریس کے ارکان اسمبلی سمپت کمار ، ومشی چندر ریڈی کے علاوہ دوسرے موجود تھے ۔ کانگریس کے پاور پوائنٹ پریزنٹیشن کا اجلاس میں جائزہ لیا گیا ۔ بعد ازاں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے اسمبلی میں 3 گھنٹوں تک آبپاشی پراجکٹس پر پاور پوائنٹ پریزینٹیشن پیش کرتے ہوئے خوبصورت جھوٹ بولا ہے اور تلنگانہ کے عوام کو بھروسہ دلاتے ہوئے دھوکہ دینے کی کوشش کی ہے ۔ کرشنا اور گوداوری پر کرناٹک اور مہاراشٹرا کی جانب سے تعمیر کردہ غیر قانونی 450 بیارجس کو تسلیم کرتے ہوئے مہاراشٹرا کے مفادات کا تحفظ کرتے ہوئے تلنگانہ مفادات کو نقصان پہونچایا ہے ۔ جس کی وجہ سے کانگریس نے چیف منسٹر کے پاور پوائنٹ پریزنٹیشن کا بائیکاٹ کیا ہے ۔ کانگریس پارٹی نے ٹی آر ایس حکومت کے پاور پوائنٹ پریزنٹیشن کا باریکی سے جائزہ لیا ہے ۔ اس کے نقائص اور نقصانات پر کانگریس کی جانب سے حقائق پر مبنی پاور پوائنٹ پریزنٹیشن پیش کرتے ہوئے عوام کو سچائی اور سازش سے واقف کرانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ عوام کو جو شکوک ہیں اس کو کانگریس پارٹی دور کرے گی ۔ انہوں نے ایف آر بی ایم کی حد میں اضافہ کرنے پر چیف منسٹر کے سی آر کو مزید قرض حاصل کرتے ہوئے کسانوں کے قرضہ جات کو یکمشت میں معاف کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب کانگریس کی جانب سے اسمبلی میں کسانوں کے یکمشت قرضے معاف کرنے کا مطالبہ کیا گیا تو چیف منسٹر نے ایف آر بی ایم کی حد میں اضافہ ہونے پر کسانوں کے یکمشت قرض معاف کرنے کا وعدہ کیا تھا ۔ لہذا چیف منسٹر اپنے وعدے کو پورا کرے ۔۔

TOPPOPULARRECENT