Tuesday , October 24 2017
Home / شہر کی خبریں / آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل کے لیے اپوزیشن کو تعاون کرنے کا مشورہ

آبپاشی پراجکٹس کی تکمیل کے لیے اپوزیشن کو تعاون کرنے کا مشورہ

تنقیدیں بند کی جائیں ، ٹی ہریش راؤ وزیر آبپاشی تلنگانہ کا بیان
حیدرآباد ۔  7  ستمبر  (سیاست  نیوز) وزیر آبپاشی ہریش راؤ نے کانگریس قائدین کو مشورہ دیا کہ وہ تلنگانہ میں آبپاشی پراجکٹس کی عاجلانہ تکمیل میں تعاون کریں اور حکومت کے اقدامات پر تنقیدوں کا سلسلہ بند کریں۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ہریش راؤ نے کہا کہ اپوزیشن کو ہر مسئلہ کو سیاسی رنگ دینے کے بجائے عوام کی بھلائی کی فکر کرنی چاہئے ۔ ہریش راؤ نے آج ضلع رنگا ریڈی کے قائدین کے ساتھ آبپاشی پراجکٹس اور دیگر مسائل پر جائزہ اجلاس منعقد کیا ۔ اس موقع پر ریاستی وزیر مہیندر ریڈی کے علاوہ ضلع کے عوامی نمائندوں اور محکمہ آبپاشی کے اعلیٰ عہدیداروں نے شرکت کی۔ اس اجلاس میں پالمور لفٹ  اریگیشن پراجکٹ اور پراناہیتا چیوڑلہ پراجکٹ کی پیشرفت کا جائزہ لیا گیا۔ ان دونوں پراجکٹس سے ضلع رنگا ریڈی میں آبپاشی اور پینے کے پانی کی ضرورتوں کی تکمیل ہوگی۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ہریش راؤ نے کہا کہ پراجکٹس کی تکمیل کا مقصد زرعی شعبہ کو فائدہ پہنچانا ہے اور حکومت مقررہ مدت میں پراجکٹس کی تکمیل کا منصوبہ رکھتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی کسانوں کے ساتھ جھوٹی ہمدردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے حکومت کو بدنام کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ 10 سال تک اقتدار پر رہنے کے باوجود کانگریس نے تلنگانہ میں ایک بھی آبپاشی پراجکٹ کو مکمل نہیں کیا۔ تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے قائدین ہمیشہ آندھرائی قائدین کے اشاروں پر کام کرتے رہے اور آندھرائی حکمرانوں نے تلنگانہ کی ترقی کو نظر انداز کیا۔ ہریش راؤ نے کانگریس قائدین سے مطالبہ کیا کہ وہ تلنگانہ میں مکمل کئے گئے پراجکٹس کی تفصیلات پیش کریں تاکہ عوام کو ان کا حقیقی چہرہ پتہ چلے۔ انہوں نے کہا کہ پوتی ریڈی پاڈو، پولی چنتلا اور دوسرے غیر قانونی پراجکٹس کی تعمیر پر تلنگانہ کے کانگریس قائدین نے خاموشی اختیار کرلی۔ اقتدار میں تلنگانہ کے حق میں آواز اٹھانے میں ناکام قائدین آج اپوزیشن میں رہ کر کسانوں سے ہمدردی کا اظہار کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عوام اچھی طرح جانتے ہیں کہ کانگریس قائدین کا مقصد صرف اپنی سیاسی بقاء ہے اور کوئی بھی ان کے بہکاوے میں نہیں آئے گا۔ انہوں نے کہا کہ ایسے وقت جبکہ حکومت مقررہ مدت میں پراجکٹس کی تکمیل کا منصوبہ رکھتی ہے، کانگریس قائدین احتجاج کے ذریعہ رکاوٹیں پیداکرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رنگا ریڈی ضلع کے پراجکٹ کے ڈیزائین میں تبدیلی سے مزید علاقوں کو فائدہ ہوگا۔ رنگا ریڈی ضلع میں 2.75 لاکھ ایکر اراضی کو سیرآب کرنے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT