Wednesday , July 26 2017
Home / کھیل کی خبریں / آج بنگلور کا گجرات سے مقابلہ‘دونوں ہی ٹیمیں کامیابی کیلئے کوشاں

آج بنگلور کا گجرات سے مقابلہ‘دونوں ہی ٹیمیں کامیابی کیلئے کوشاں

راجکوٹ۔17 اپریل (سیاست ڈاٹ کام ) انڈین پریمیئر لیگ میں انتہائی خراب دور سے گزر رہی رائل چیلنجرز بنگلور اور گجرات لائنز کی ٹیمیں اپنے زبردست کپتانوں ویراٹ کوہلی اور سریش رینا کی قیادت کے باوجود جیت سے کوسوں دور نظر آرہی ہیں اور دونوں ٹیمیں راجکوٹ کے میدان پر کل کھیلے جانے والے مقابلے میںفتح کے ساتھ اپنا موقف بہتر بنانے کے لئے کوشاں ہوگیں۔ بنگلور نے اپنا گزشتہ مقابلہ پونے سے 27 رنوں سے گنوایا تھا تو گجرات کو اسی دن ممبئی انڈینس نے چھ وکٹ سے شکست دی تھی۔ دونوں ٹیموں کی صورتحال فی الحال ٹورنامنٹ میں ایک جیسی ہی ہے ۔ بنگلور ،پانچ میچوں میں ایک جیت اور چار ناکامیوں کے ساتھ فہرست میں آخری مقام پر پہنچ گئی ہے تو گجرات نے چار میچوں میں ایک میچ پر فتح پائی ہے اور تین میں اسے شکست کا منہ دیکھنا پڑا ہے ۔ وہ بنگلور سے ایک مقام اوپر یعنی ساتویں نمبر پر ہے ۔ کوہلی اور چوٹ کے بعد ہی واپسی کر رہے اے بی ڈی ولیرس کو چھوڑ دیں تو ٹیم کے باقی بیٹسمینس کچھ خاص کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کر پا رہے ہیں۔ بنگلور کی ٹیم گزشتہ میچوں میں بڑا اسکور بنانے میں کامیاب نہیں ہوئی ہے تو وہیں اس کے بولروں نے بھی مایوس کیا ہے جو اس کے کسی بھی ا سکورکا دفاع ہی نہیں کر سکے ہیں۔گجرات کی حالت بھی کچھ خاص نہیں ہے جس کی قیادت آئی پی ایل کے اب تک کے سب سے زیادہ کامیاب اور مسلسل کھلاڑی سریش رینا کے ہاتھوں میں ہیں۔ ہندستانی ٹیم سے طویل عرصے سے باہر رہنے والے رائنا اپنی ٹیم کے دوسرے بہترین اسکورر ہیں لیکن پھر بھی وہ گجرات کا حوصلہ نہیں بڑھا پا رہے ہیں۔ اس کے پاس رائنا، برنڈن مکا کولم، دنیش کارتک، آرون فنچ، جیسن رائے اور ڈیون اسمتھ جیسے باصلاحیت کھلاڑی ہیں۔کپتان کوہلی کی ٹیم میں واپسی کے بعد بنگلور کو ملی یہ مسلسل دوسری شکست ہے ۔مندیپ کو گزشتہ میچ میں جہاں چھٹے نمبر پر اتارا گیا تھا تو وہیں پونے کے خلاف کپتان نے انہیں اوپننگ میں اتارا لیکن وہ دونوں ہی نمبر پر وہ مایوس کر گئے اور صفر پر آؤٹ ہوئے ۔ اس میچ میں کپتان نے بہت تبدیلی کی تھیں ۔ گیل کو باہر بٹھا کر واٹسن کو موقع دیا گیا۔ بنگلور کی ناقص بیٹنگ کے ساتھ ڈیتھ اوورو میں اس مایوس کن اور مہنگی بولنگ کی کمزوری پھر سے اجاگر ہو گئی جس سے آخری وقت میں مخالف ٹیم نے جہاں ایک وقت 130 رن پر سات وکٹ نکال لئے تو وہیں پونے نے آٹھ وکٹ تک اسکور 161 تک پہنچا دیا جس کی وجہ سے بنگلور کے ہاتھوں سے آخر میں میچ نکل گیا۔ گیل کی جگہ اس میچ میں وراٹ نے واٹسن کو موقع دیا تھا لیکن آسٹریلیائی آل راؤنڈر44 رنز دے کر سب سے مہنگے بولر ثابت ہوئے ۔ وہیں سیموئیل بدری نے بھی 32 رن دیئے ‘اگرچہ ایڈم ملنے ، سری ناتھ اروند اور پون نیگی کی کارکردگی تسلی بخش رہی اور امید ہے کہ راجکوٹ میں بھی وہ گجرات کے خلاف اہم ثابت ہوں گے جو خود بھی کمزور موقف میں ہی ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT