Tuesday , April 25 2017
Home / ہندوستان / آدھار کارڈ نہ ہونے پر فوائد سے محرومی کی تردید

آدھار کارڈ نہ ہونے پر فوائد سے محرومی کی تردید

متبادل شناختی دستاویزات سرکاری فلاحی اسکیموں سے استفادہ کیلئے کارآمد
نئی دہلی۔ 7 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کے تمام شہری سرکاری اسکیموں کے فوائد سے شناخت کے متبادل طریقوں کے ذریعہ استفادہ کرسکتے ہیں۔ حکومت نے آج کہا کہ انہیں آدھار نمبر مختص کئے جانے تک شناخت کے دیگر تمام دستاویزات قبول کئے جائیں گے اور شہریوں کو سرکاری اسکیموں کے فوائد سے محروم نہیں کیا جائے گا۔ کابینہ کی سیکریٹریٹ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ ملک کے 112 کروڑ افراد کو تاحال آدھار کارڈ جاری کیا جاچکا ہے۔ دوپہر کی کھانے کی اسکیم کا حوالہ دیتے ہوئے بیان میں کہا گیا ہے کہ بچوں کے آدھار نمبر کیلئے اصرار نہ کیا جائے۔ اسکولس اور آنگن واڑی تنظیمیں دوپہر کے کھانے کی اسکیم سے استفادہ کرنے کیلئے بچے کے اسکول میں شریک ہونے کی دستاویزات کافی ہوں گی۔ جب تک آدھار نمبر مختص نہ کیا جائے، شناخت کی دیگر دستاویزات کارآمد ہوں گی۔ سرکاری اسکیموں کے فوائد سے کسی کو بھی آدھار کی غیرموجودگی کی بناء پر محروم نہیں کیا جائے گا۔ آدھار کارڈ کی افادیت ظاہر کرتے ہوئے بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے سربراہی کے نظام میں شفافیت پیدا کرنے کیلئے فلاحی اسکیمیں آدھار کارڈ سے مربوط کیا ہے، تاہم اس کی عدم موجودگی کی وجہ سے ہندوستان کے کسی بھی شہری کو سرکاری فلاحی اسکیموں کے فوائد سے محروم نہیں کیا جاسکتا۔ دیگر شناختی دستاویزات قابل قبول ہوں گی۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT