Saturday , August 19 2017
Home / ہندوستان / آسارام باپو کے ڈاکٹر کو ہلاک کرنے کا اعتراف

آسارام باپو کے ڈاکٹر کو ہلاک کرنے کا اعتراف

راجکوٹ ۔ 29 مارچ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) آسارام باپو کے قریبی آدمی کارتک ہلدار نے آج کہا کہ اُس نے خود ساختہ تانترک کے پرسنل ڈاکٹر کو ہلاک کیا ہے ۔ آسارام باپو کے خلاف عصمت ریزی کے مقدمات میں تین عینی گواہان میں وہ بھی ایک ہے ۔ کارتک نے کہاکہ یہ ڈاکٹر مسلسل انھیں بلیک میل کررہا تھا اور خاموشی اختیار کرنے کیلئے بھاری رقم کا تقاضہ کررہا تھا ۔ کارتک ہلدار کو اے ٹی ایس اور کرائم برانچ نے جاریہ ماہ مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے چھتیس گڑھ کے رائے پور میں گرفتار کیا تھا ۔ کارتک نے کہاکہ وہ آسارام کا بھگت ہے اور اُس نے ڈاکٹر امروت پرجا پتی کو جون 2014 ء میں ہلاک کرنے کیلئے کوئی رقم نہیں لی ۔ کارتک ہلدار مبینہ طورپر آسارام کے مددگار اور باؤرچی اکھل گپتا کی گزشتہ سال جنوری میں ہلاکت میں بھی ملوث ہے ۔ اس کے علاوہ ایک اور عینی گواہ کرپال سنگھ کو بھی مبینہ طورپر اُسی نے ہلاک کیا تھا ۔ کارتک ہلدار نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کو بتایا کہ پرجاپتی عصمت ریزی کے مقدمات میں لب کشائی نہ کرنے کیلئے آسارام سے بھاری رقم کا تقاضہ کررہا تھا ۔ مجھے جب پتہ چلا کہ پرجاپتی ہر جمعہ کو راجکوٹ کلینک آیا کرتا ہے تو میں بھی وہاں پہونچ گیا اور اُس پر جب وہ کلینک سے باہر نکل رہا تھا فائرنگ کردی ۔

TOPPOPULARRECENT