Tuesday , September 26 2017
Home / کھیل کی خبریں / آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کے درمیان آج فیصلہ کن ٹوئنٹی 20

آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کے درمیان آج فیصلہ کن ٹوئنٹی 20

کیپ ٹاؤن ۔ 8مارچ ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) گزشتہ مقابلے میں 204 رنز کے کامیاب تعاقب کے بعد آسٹریلیائی ٹیم کل یہاں میزبان جنوبی افریقہ کے خلاف کھیلے جانے والے سیریز کے تیسرے اور فیصلہ کن ٹوئنٹی 20 مقابلے میں کامیابی حاصل کرنے کیلئے کوشاں ہیں تاکہ ہندوستان ورلڈ کپ میں شرکت کیلئے روانگی سے قبل سیریز اپنے نام کرتے ہوئے اعتماد کو بلند کیا جاسکے ۔ آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کیلئے یہ آئی سی سی ٹوئنٹی 20 ورلڈ کپ میں شرکت سے قبل آخری بین الاقوامی مقابلہ ہے۔ آسٹریلیا کیلئے ٹاپ آرڈر کی ناکامی تشویش کا باعث ہے جیسا کہ گزشتہ مقابلے میں جب ٹیم ایک ہمالیائی اسکور کا تعاقب کررہی تھی اُس وقت ٹیم کے اوپنرس آرون فنچ اور شین واٹسن بہتر شروعات دینے میں ناکام رہے جبکہ مستقل اوپنر ڈیوڈ وارنر کو نمبر 4 پر بیٹنگ کیلئے روانہ کیا گیا تھا جنھوں نے میکسویل کے ہمراہ ریکارڈ پارٹنرشپ کے ذریعہ ٹیم کو ایک یادگار کامیابی دلوانے میں کلیدی رول ادا کیا۔ آسٹریلیائی ٹیم انتظامیہ کیلئے اوپنرس کا انتخاب ایک مسئلہ بنا ہوا ہے کیونکہ ایک جانب عثمان خواجہ شاندار مظاہرے کرنے کے باوجود قطعی گیارہ کھلاڑیوں میں جگہ حاصل نہیں کرپارہے ہیں وہیں تجربہ کار فنچ اور واٹسن کی جوڑی ٹیم کو بہتر شروعات فراہم کرنے میں ناکام ہورہی ہے ۔ اُمید ہے کہ فیصلہ کن مقابلے میں فنچ کے مقام پر عثمان خواجہ کو موقع دیا جائے گا۔

ڈیوڈ وارنر کو میڈل آرڈر میں کھلانے کا فیصلہ اسمتھ کیلئے بہتر ثابت ہوا ہے جنھوں نے میکسویل کے ہمراہ ایک شاندار کامیابی دلوائی ہے ۔ علاوہ ازیں آل راؤنڈ مچل مارش کا لوور آرڈر میں بیٹنگ کرنے کابھی ٹیم کیلئے سود مند ثابت ہورہا ہے ۔ دوسری جانب جنوبی افریقی ٹیم جس نے اپنے بہترین کھلاڑی اے بی ڈی ویلیرس کو اننگز کے آغاز کا موقع فراہم کیا ہے ، تاہم وہ ہنوز بڑی اننگز سے دور ہیں۔ میزبان ٹیم کا انتظامیہ اُمید کررہا ہے کہ وہ اس مقابلے میں ٹیم کو بہترین شروعات فراہم کرنے کے علاوہ ہندوستان روانگی سے قبل اپنے نام ایک بڑی اننگز درج کروائیں گے ۔ بولنگ شعبہ میں آسٹریلیا کیلئے کوئی عالمی شہرت یافتہ بولر نہ ہونے کی وجہ سے کسی قدر مسائل درپیش ہیں لیکن جان ہاسٹنگ اور ہیزل ووڈ سے بہتر مظاہرے کی اُمید کی جارہی ہے ۔ میزبان ٹیم کے بولنگ شعبہ میں رباڈا کے ہمراہ سینئر فاسٹ بولر ڈیل اسٹن کے مظاہرے توجہ کے مرکز ہیں کیونکہ ورلڈ کپ میں ٹیم کے وہ کلیدی بولر ہوں گے لیکن ہندوستان کی وکٹیں بولنگ کی بہ نسبت بیٹنگ کیلئے سازگار ہیں لہذا اس مقابلے میں اسٹن کے مظاہرے اہمیت کے حامل ہیں۔

TOPPOPULARRECENT