Wednesday , October 18 2017
Home / شہر کی خبریں / آصف نگر کی وقف اراضی غریبوں میں پٹہ جات کے تحت تقسیم

آصف نگر کی وقف اراضی غریبوں میں پٹہ جات کے تحت تقسیم

محکمہ مال کا اقدام ، اراضی تحفظ کیلئے وقف بورڈ کی مساعی ، سروے پر وقف اراضی ثابت
حیدرآباد۔/8جنوری، ( سیاست نیوز) محکمہ مال کی جانب سے آصف نگر میں واقع اوقافی اراضی کو غریبوں میں پٹہ جات کے طور پر تقسیم کردیا گیا۔ جس کے تحفظ کے لئے تلنگانہ وقف بورڈ نے کلکٹر حیدرآباد سے نمائندگی کی ہے۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر وقف بورڈ محمد اسد اللہ نے بتایا کہ محکمہ مال کی جانب سے امام پورہ قبرستان اور مسجد کے تحت 13گنٹے اوقافی اراضی پر پٹہ جات جاری کردیئے ہیں۔ یہ اراضی وقف ہے جس کا ریکارڈ موجود ہے۔ اے پی گزٹ 22Aمورخہ 17مئی 1984 میں یہ اراضی وقف کی حیثیت سے درج ہے۔ وقف بورڈ کے عہدیداروں نے پٹوں کی اجرائی سے متعلق شکایت ملنے پر اراضی کا سروے کرایا جس میں پتہ چلا کہ حکومت نے جی او 58کے تحت 37 پٹہ جات جاری کئے ہیں جو اراضی کے موجودہ قابضین کو جاری کئے گئے۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر نے کہا کہ اوقافی اراضی کے پٹہ جات جاری کرنا غیر قانونی عمل ہے اور محکمہ مال کو فوری پٹہ جات منسوخ کرنے چاہیئے۔ انہوں نے متعلقہ ریونیو ڈیویژنل آفیسر کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے وقف ایکٹ اور سپریم کورٹ کے فیصلہ سے آگاہ کیا جس کے تحت ایک مرتبہ وقف کی گئی اراضی ہمیشہ کیلئے وقف ہوتی ہے جس کی خرید و فروخت نہیں کی جاسکتی۔ انہوں نے بتایا کہ اوقافی اراضیات کے تحفظ کیلئے حکومت نے 25جون 2002کو جی او ایم ایس 374 جاری کرتے ہوئے خصوصی ٹاسک فورس تشکیل دی ہے جس میں ریونیو اور پولیس عہدیدار شامل کئے گئے۔ اس کمیٹی کا مقصد اوقافی جائیدادوں پر ناجائز قبضوں کی برخواستگی اور غیر قانونی تعمیرات کو منہدم کرتے ہوئے تحفظ کرنا ہے۔ ٹاسک فورس کو غیر مجاز قابضین کے خلاف کارروائی کا اختیار دیا گیا۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر نے کلکٹر حیدرآباد کو جو ٹاسک فورس کے صدرنشین ہیں مکتوب روانہ کرتے ہوئے امام پورہ کی اوقافی اراضی کے پٹہ جات منسوخ کرنے کی خواہش کی  ہے۔ چیف ایکزیکیٹو آفیسر اس مسئلہ میں ریونیو عہدیداروں سے مسلسل ربط میں ہیں۔ اس اراضی کے تحفظ کیلئے دکن وقف پروٹیکشن کمیٹی نے عثمان الہاجری کی قیادت میں وقف بورڈ سے نمائندگی کی تھی۔ ایڈیٹر ’سیاست‘ جناب زاہد علی خاں نے کمیٹی کو اس مقام کا معائنہ کرنے اور وقف بورڈ سے رجوع ہونے کا مشورہ دیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT