Monday , August 21 2017
Home / شہر کی خبریں / آندھراپردیش حج کمیٹی میں چیرمین و ایم ایل سی کے رشتہ داروں کے تقررات

آندھراپردیش حج کمیٹی میں چیرمین و ایم ایل سی کے رشتہ داروں کے تقررات

کمیٹی سے دو نئی گاڑیوں کی خریدی، تقررات پر اعتراضات میں اضافہ
حیدرآباد۔/6اگسٹ، ( سیاست نیوز) آندھرا پردیش حج کمیٹی میں ملازمین کی کمی کو دیکھتے ہوئے 7 افراد کے تقررات کئے گئے۔ آندھرا پردیش حج کمیٹی کی تشکیل کے بعد اسے ملازمین کی قلت کا سامنا تھا اور متحدہ آندھرا پردیش کی کمیٹی میں آندھرا سے تعلق رکھنے والے 4 ملازمین ابھی تک رجوع نہیں ہوئے لہذا صدرنشین حج کمیٹی نے مختلف عہدوں پر 7 تقررات عمل میں لائے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ صدرنشین نے پرسنل اسسٹنٹ ( پی اے )، کمپیوٹر آپریٹرس، پی آر او اور اٹینڈرس کے عہدوں پر تقررات کئے ہیں۔ ایک تلگو ٹی وی چینل کے رپورٹر کو پی آر او مقرر کیا گیا۔ اگرچہ یہ تقررات عارضی نوعیت کے ہیں لیکن بعد میں کمیٹی میں منظوری حاصل کرتے ہوئے انہیں مستقل کیا جاسکتاہے۔ بتایا جاتا ہے کہ متحدہ آندھرا پردیش کی حج کمیٹی کے 19 ملازمین کے منجملہ 4 کا تعلق آندھرا پردیش سے ہے جن میں 2ملازمین نے حیدرآباد میں تعلیم کے سبب تلنگانہ کیلئے اپنا آپشن داخل کیا ہے تاہم اس سلسلہ میں حکومت کو قطعی فیصلہ کرنا باقی ہے۔ حج کمیٹی میں کئے گئے تقررات پر مختلف گوشوں سے اعتراضات کئے جارہے ہیں کیونکہ اطلاعات کے مطابق صدرنشین کے بعض رشتہ داروں اور ایک ایم ایل سی کے سفارش کردہ افراد کا تقرر کیا گیا۔ بتایا جاتا ہے کہ حج کمیٹی کی جانب سے دو نئی گاڑیاں بھی خریدی گئی ہیں۔ واضح رہے کہ حج کمیٹی کے موجودہ صدرنشین مومن احمد تلگودیشم دور حکومت میں اقلیتی فینانس کارپوریشن کے صدرنشین تھے۔

TOPPOPULARRECENT