Thursday , August 24 2017
Home / Top Stories / آندھرا پردیش کو خصوصی موقف کیلئے جدوجہد جاری رہے گی

آندھرا پردیش کو خصوصی موقف کیلئے جدوجہد جاری رہے گی

کرنول میں یووا بھیری پروگرام سے وائی ایس آر کانگریس صدر جگن موہن ریڈی کا خطاب
کرنول ۔ 25 ۔ اکٹوبر : ( سیاست نیوز ) : اے پی اسمبلی میں قائد اپوزیشن وائی ایس جگن موہن ریڈی نے کہا کہ ریاست کو خصوصی زمرہ کے موقف کیلئے ہماری جدوجہد جاری رہے گی اور کہا کہ وہ اس مسئلہ کو مختلف فورمس میں اٹھائیں گے اور اس مسئلہ کو پارلیمنٹ میں اٹھائیں گے اور اگر ضرورت ہو تو ہمارے ارکان پارلیمنٹ استعفیٰ دیں گے اور اس مسئلہ کی شدت کو ثابت کرنے کیلئے دوبارہ انتخابات چاہیں گے ۔ آج یہاں یووا بھریی میں نوجوانوں سے خطاب کرتے ہوئے جگن موہن ریڈی نے کہا کہ ریاست آندھرا پردیش کے لیے خصوصی موقف حاصل کرنے کیلئے ہمیں ایک ساتھ ہو کر جدوجہد کرنا ہوگا کیوں کہ یہ ہمارا مستقبل ہے اور ہم اس کو فراموش نہیں کرسکتے ہیں ۔ بلکہ ہمیں اپنی بھر پور کوشش سے اسے حاصل کرنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ جب لوگ ایجی ٹیشن کے ذریعہ تلنگانہ حاصل کرسکتے ہیں تو ہم آندھرا پردیش کے لیے خصوصی زمرہ کا موقف کیوں نہیں حاصل کرسکتے ہیں ۔ جس کا پارلیمنٹ میں تیقن دیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ قیادت کا انداز اس سلسلہ میں عوام کے یقین کے برعکس ہے اور ہمیں اس کے حصول کے لیے مسلسل جدوجہد کرنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم اس مسئلہ کو دستیاب تمام فورمس میں اٹھائیں گے اور ہمارے ارکان پارلیمنٹ اس مسئلہ کو پارلیمنٹ میں اٹھائیں گے اور اگر آئندہ بجٹ سیشن میں اس سلسلہ میں کوئی تیقن نہیں دیا گیا تو ہمارے ایم پیز مستعفی ہونے میں پیچھے نہیں ہوں گے اور اس مسئلہ پر دوبارہ انتخابات میں حصہ لیں گے ۔ انتخابات کے دوران جلسہ عام میں خصوصی موقف کا تیقن دینے کے نریندر مودی ، وینکیا نائیڈو اور چندرا بابو نائیڈو کے اے وی کلپنگس بتاتے ہوئے جگن موہن ریڈی نے کہا کہ یہ لوگ انتخابات کے وقت کیے گئے وعدہ سے منحرف ہوگئے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT