Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / آٹو ہڑتال سے دستبرداری ، آدھار کارڈ کے لزوم پر نظر ثانی

آٹو ہڑتال سے دستبرداری ، آدھار کارڈ کے لزوم پر نظر ثانی

کوئی شناختی ثبوت پیش کرنے کی اجازت ، آٹو ڈرائیورس جے اے سی کا اعلان
حیدرآباد ۔ 17 ۔ اگست : ( پریس نوٹ ) : کنوینر تلنگانہ آٹو ڈرائیورس جوائنٹ ایکشن کمیٹی مسٹر محمد امان اللہ خاں کے بموجب آر ٹی اے دفاتر میں آج سے محکمہ ٹرانسپورٹ کی جانب سے دستاویزات کی منتقلی کے لیے آدھار کارڈ کی پیشکشی کو اختیاری قرار دیا گیا ہے ۔ انہوں نے گاڑیوں کے مالکین اور ڈرائیورس کو اس بات سے آگاہ کروایا کہ انہیں آر ٹی اے دفاتر میں آدھار کارڈ کو پیش کرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ درخواست گذار کوئی بھی ثبوت جیساکہ پاسپورٹ یا پھر ووٹر آئی ڈی پیش کرسکتے ہیں ۔ یہ آدھار کارڈ کا متبادل ہیں ۔ آر ٹی اے کے عہدیداران آدھار سے ہٹ کر دیگر ثبوت کو بھی قبول کریں گے ۔ کنوینر کمیٹی کے علاوہ مسرس ایم اے سلیم ، جے رویندر اور مرزا رفعت اللہ بیگ نے اپنے ایک صحافتی بیان میں یہ بات بتائی ۔ انہوں نے مزید بتایا کہ محکمہ ٹرانسپورٹ نے تقریبا 20 دنوں تک آدھار کارڈ کی بنیاد پر گاڑیوں کی فروخت کے دستاویزات کے لیے منتقلی کی شرط پر عمل کیا تھا تاہم کمیٹی نے اس کے خلاف مسلسل جدوجہد اور حکومت سے نمائندگی کی تھی ۔ جس کے بعد محکمہ ٹرانسپورٹ نے اس پر نظر ثانی کا فیصلہ کر کے عمل آوری بھی شروع کردی ہے لہذا 18 اگست کو منعقد شدنی آٹو بند کے اعلان سے دستبرداری اختیار کرلی گئی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT