Friday , October 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ابراہیم یافعی پر دیڑھ فٹ کے فاصلہ سے فائرنگ

ابراہیم یافعی پر دیڑھ فٹ کے فاصلہ سے فائرنگ

چندرائن گٹہ حملہ کیس ، پروفیسر فارنسک پر دوسرے دن بھی جرح
حیدرآباد ۔ 16 ڈسمبر (سیاست نیوز) نامپلی کریمنل کورٹ نے روزانہ کی اساس پر جاری چندرائن گٹہ حملہ کیس سماعت کے دوران آج دوسرے دن بھی ریٹائرڈ پروفیسر فارنسک میڈیسن پر وکیل دفاع نے جرح کیا۔ ڈاکٹر پی ہری کرشنا نے عدالت کو جرح کے دوران یہ بتایا کہ مہلوک نوجوان کے جسم پر گولی کا زخم دیڑھ فیٹ کے فاصلہ سے فائرنگ کئے جانے کا نتیجہ ہے۔ ابراہیم یافعی کو حلقہ اسمبلی ملک پیٹ کے گن مین جانی میاں نے اپنی سرویس پستول سے فائرنگ کرکے ہلاک کردیا تھا۔  انہوں نے بتایا کہ ملبوسات دیکھنے پر وہ گولی چلائے جانے کے فاصلہ کا اندازہ لگاسکتے تھے لیکن انہوں نے ایک جینس پائنٹ جس پر گولی کا نشان موجود تھے، بتائے جانے پر انہوں نے یہ بتایا کہ وہ اس تصویر کے ذریعہ یہ نہیں بتا سکتے ہیں کہ پائنٹ پر نشان گولی لگنے یا کسی دوسری وجہ سے آیا ہوگا۔ انہوں نے وکیل دفاع کے اس بات سے اتفاق کیا کہ گولی لگنے کے نتیجہ میں پیش آنے والے زخم کا حصہ اکثر سیاہ اور ٹائیٹونما ہوجاتا ہے۔ انہوں نے اس بات کا بھی اعتراف کیا کہ ایسا زخم اس وقت ہوتا ہے جب گولی قریبی فاصلہ سے کی جاتی ہے۔ ڈاکٹر پی ہری کرشنا نے بتایا کہ پوسٹ مارٹم کی رپورٹ پہلے ڈرافٹ کی شکل میں تیار کی جاتی ہے اور بعدازاں اسے رپورٹ کی شکل میں تحریر کیا جاتا ہے۔ ( سلسلہ صفحہ 10 پر )

TOPPOPULARRECENT