Friday , August 18 2017
Home / ہندوستان / اتحاد اور توکل ۔ مومن کیلئے کامیابی کی ضمانت

اتحاد اور توکل ۔ مومن کیلئے کامیابی کی ضمانت

مسجد فتح پوری دہلی کے شاہی امام مفتی محمد مکرم احمد کا خطاب
نئی دہلی 8 جنوری (فیاکس) شاہی امام مسجد فتح پوری دہلی مفکر ملت مولانا ڈاکٹر مفتی محمد مکرم احمد نے آج نماز جمعہ سے قبل خطاب میں کہاکہ اتحاد اور اللہ پر بھروسہ یہ دونوں عمل ہر مومن کی کامیابی کی ضمانت ہیں۔ انفرادی اور اجتماعی فلاح و بہبود ان ہی دو باتوں پر منحصر ہے۔ قرآن کریم میں بھی اس کی بہت تاکید ہے اور رسول کریم صلی اللہ علیہ و سلم نے عملی طور پر بھی اس کی تاکید فرمائی ہے۔ یہ دو صفات ہیں جن کی وجہ سے اُمت کو کامیابی ملی اور آئندہ بھی ملے گی۔ ہر مسلمان کے لئے ضروری ہے کہ اللہ تعالیٰ کے ان احکام پر سختی سے عمل کرکے فلاح دارین حاصل کریں۔ شاہی امام نے پٹھان کوٹ صوبہ پنجاب میں ایر بیس پر دہشت گردانہ حملہ کی شدید مذمت کی اور اسے دونوں ملکوں کے خلاف سازش سے تعبیر کیا۔ انھوں نے کہاکہ ہندوستان کی آرمی نے اسے ناکام بنادیا، یہ اطمینان کی بات ہے۔ دہشت گردی کی شدید مذمت ہونی چاہئے، یہ غیر انسانی غیر اسلامی ظالمانہ فعل ہے جس کی ہر طرف مذمت ہونی چاہئے۔ پچھلے دنوں ہندوستان اور پاکستان کے مابین تعلقات ہموار ہوتے دیکھ کر کچھ لوگوں نے اس سازش کو رچا تھا آئندہ ایسی سازش کامیاب نہ ہو اس کے لئے چوکنا رہنے کی ضرورت ہے۔ ہمیں خوشی ہے کہ ہندوستان نے سنجیدگی کا مظاہرہ کیا۔
دوسری طرف پاکستان کے وزیراعظم نے کارروائی کا یقین دلایا یہ خوش آئند ہے۔ مذاکرات میں کوئی خلل نہ پڑے تو اس سے یہ ناپاک سازش بالکل ہی ناکام ہوجائے گی۔ شاہی امام نے پچھلے دنوں سعودی عرب حکومت کی طرف سے 47 علماء و دیگر افراد کو اجتماعی پھانسی پر پیدا ہونے والی صورتحال پر افسوس کا اظہار کیا۔ انھوں نے کہاکہ ان حالات میں سعودی حکومت کے اس اقدام کو دانشمندانہ نہیں کہا جاسکتا۔ دوسری طرف تہران میں سعودی سفارت خانہ پر حملہ بھی افسوسناک ہے جس کی مذمت ہونی چاہئے۔ ہماری دعا ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان حالات معمول پر آجائیں اور گفت و شنید سے مسائل حل ہوں۔ سعودی اور ایران کو سفارتی تعلقات ہموار کرنے کی بھی کوشش کرنی چاہئے۔ متحدہ عرب امارات، قطر، سوڈان، بحرین، کویت وغیرہ نے بھی اسلامی جمہوریہ ایران سے سفارتی تعلقات منقطع کرلئے اس سے خطہ میں بدامنی پیدا ہونے سے صیہونی حکومت کو خوشی ہورہی ہے نیز خود ساختہ اسلامی تنظیموں کو بھی چھوٹ مل رہی ہے۔ خطرہ یہ ہے کہ حالات بے قابو نہ ہوجائیں۔ عرب اور عجم میں اسلامی اُخوت کا جو درس پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ و سلم نے دیا ہے وہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔

TOPPOPULARRECENT