Monday , June 26 2017
Home / Top Stories / اتراکھنڈ میں کانگریس حکومت ترقیاتی ویژن سے محروم

اتراکھنڈ میں کانگریس حکومت ترقیاتی ویژن سے محروم

جھارکھنڈ اور چھتیس گڑھ کی ترقی کا حوالہ ‘ انتخابی جلسہ سے مودی کا خطاب

شری نگر ۔12فبروری ( سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے اتراکھنڈ کے عوام سے مرکز میں حکمراں جماعت ( کانگریس) کے خلاف ووٹ دے کر اس جماعت کو اقتدار سے بیدخل کردیں اور بی جے پی کو ایک موقع دیا جائے ‘ تاکہ آئندہ پانچ سال کے دوران اس ریاست کی ترقی کی نئی بلندیوں تک رسائی کو یقینی بنایا جاسکے ۔ مودی نے الزام عائد کیا کہ اتراکھنڈ میں سیاحت اور معاون شعبوں میں بے پناہ وسائل کی موجودگی کے باوجود ریاستی کانگریس حکومت کے پاس اتراکھنڈ کی ترقی کا کوئی ویژن نہیں ہے ۔ مودی نے گیٹس میدان میں بی جے پی کی ایک انتخابی ریالی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’ کیا آپ نے کبھی سوچا ہے کہ بے پناہ وسائل اور صلاحیتیں رکھنے کے باوجود اتراکھنڈ آخر کیوں جھارکھنڈ اور چھتیس گڑھ سے پیچھے ہے۔ یہ تینوں ریاستیں اٹل بہاری واجپائی کی طرف سے بنائی گئی تھیں ۔ ماؤسٹوں کے مسئلہ کے باوجود چھتیس گڑھ نے بی جے پی کی ریاستی حکومت کے ساتھ خود کو تیز رفتار ترقی کرنے والی ریاستوں میں شامل کروا لیا ہے ‘‘ ۔ انہوں نے کہا کہ جھارکھنڈ بھی ایک پسماندہ علاقہ ہونے کے باوجود بی جے پی اقتدار میں سرمایہ کاری کو راغب کیا ۔ پھر کیا وجہ ہے کہ ترقی کے معاملہ میں اتراکھنڈ ان دونوں ریاستوں سے پیچھے ہے ۔ وزیراعظم نے دعویٰ کیا کہ کانگریس کی ریاستی حکومت کے پاس اس ریاست کی ترقی کیلئے کوئی ویژن نہیں ہے ۔ انہوں نے عوام پر زور دیا کہ اس مرتبہ اپنی تقدیر بدلنے کیلئے وہ بی جے پی بھرپور تائید کریں ۔
یو پی انتخابات میں ایس پی کو جے ڈی یو کی تائید
لکھنو۔12فبروری ( سیاست ڈاٹ کام) جنتادل ( یونائٹیڈ) نے آج واضح طور پر اسمبلی انتخابات کیلئے سماج وادی پارٹی ۔ کانگریس اتحاد کی تائید کا اعلان کردیا ۔ ریاستی صدر جے ڈی یو سریش نرنجن نے اپنی پارٹی کی اتحاد کے امیدواروں کی تائید کا اعلان کیا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT