Tuesday , May 23 2017
Home / Top Stories / احمدآباد کا بھجیا والا، انکم ٹیکس کیلئے پراسرار معمہ

احمدآباد کا بھجیا والا، انکم ٹیکس کیلئے پراسرار معمہ

۔400 کروڑ روپئے کی جائیدادیں، نقد رقومات، ہیرے جواہرات اور طلائی زیورات
سورت، 21دسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ٹھیلے پر چائے اور بھجیا پکوڑے فروخت کرنے سے لے کر ارب پتی بننے کے پراسرار سفر کی وجہ سے انکم ٹیکس محکمہ کو چکرا دینے والے گجرات کے سورت شہر کے کشور بھجیا والے کی کل جائیداد کی رقم کا اعدادو شمار مسلسل بڑھتا ہی جارہا ہے ۔ دوسری طرف گجرات کے ہی ایک دیگر پراسرار پراپرٹی ڈیلر مہیش شاہ کی طرف سے آمدنی اعلان اسکیم کے تحت آخری دن آدھی رات کے وقت 13860 کروڑ روپے کی آمدنی کا اعلان کرکے اس سے پلٹ جانے کے معاملے نے بھی انکم ٹیکس محکمہ کو کافی پریشانی میں ڈال رکھا ہے ۔بھیجا والا کے گھر، دفتر او ردیگر ٹھکانوں پر چھ دن تک انکم ٹیکس کی چھاپہ ماری کے بارے میں حالانکہ اب تک محکمہ کی طرف سے کوئی باضابطہ اعلان نہیں کیا گیا ہے لیکن محکمہ کے ذرائع کے مطابق اس کی منقولہ اور غیر منقولہ جائیدادسابقہ کے 400کروڑ روپئے کے اندازے سے کہیں زیادہ ہے ۔

اس کے پاس سے موصولہ 14 کیلو سونا اور سونے کے زیورات ، 150کیلو سے زیادہ ٹھوس چاندی اور ایک کیلو ہیرے کے زیورات اور تقریباً دیڑھ کروڑ روپئے کے نئے پرانے نوٹوں کی نقدی اور سورت میں کروڑوں کی دیگر جائیداد کے بعد ممبئی کے کاندی ولی میں بھی اس کے پاس تقریباً دو سو کروڑ روپے کی جائیداد اور گجرات کے نوساری اوردیگر مقامات پر بھی بنگلے اور مکان وغیرہ کا پتہ چلا ہے ۔ ذرائع نے بتایا کہ اس کی پوری جانچ کی جارہی ہے ۔تین دہائی پہلے سورت کے ادھاناایکسٹنشن میں پکوڑے یعنی بھجیا اور چائے کا ٹھیلہ لگانے والے کشور نے بعد میں مبینہ طور پر لوگوں کو اونچی شرح سود پر پیسے دے کر ان کی جائیدادیں ہڑپ کرلیں۔ اس کے بعد ایک قریبی دوست کی بیوی نے بھی پولیس میں اس پر ان کی ٹولس فیکٹری پر اسی طرح قبضہ کرنے کی شکایت در ج کرائی۔ مقامی لوگوں نے اس سود کے معاملے میں کافی بے رحمی سے کام لینے کا الزام لگاتے ہوئے دعویٰ کیا کہ وہ پیسے کے بدلے لوگوں سے منگل سوتر تک لے جاتا تھا ۔ کشور کے البم میں بی جے پی کے کئی وزیروں اور دیگر لیڈروں کے ساتھ اس کی اور اس کے خاندان کے لوگوں کی تصویریں بھی ملی ہیں۔

حالانکہ کئی لیڈروں نے اس سے جان پہچان نہیں ہونے کی بات کہی ہے ۔ حالانکہ اب تک بھجیا والے کی گرفتاری نہیں ہوئی ہے ۔ انکم ٹیکس کے ذرائع نے بتایا کہ پوری جانچ کے بعد ہی کوئی قانونی کارروائی ہوگی۔دوسری طرف احمد آباد کے رہائشی مہیش شاہ کے معاملے سے بھی انکم ٹیکس محکمہ کافی الجھن میں ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ کچھ وقت پہلے یہاں ایک ٹی وی چینل کے اسٹوڈیومیں ڈرامائی انداز میں پکڑے گئے شاہ نے اب تک کوئی ٹھوس جانکاری نہیں دی ہے ۔ شاہ نے دعویٰ کیا تھا کہ یہ پیسہ دوسرے لوگوں کا تھا جس کا اعلان اس نے اپنے نام سے کیا تھا۔ اسے بھی اب تک باضابطہ گرفتار نہیں کیا گیا ہے ۔ اس نے ٹی وی پر اپنے انٹرویو میں کہا تھا کہ وہ انکم ٹیکس محکمہ کو تمام نام بتادے گا اور اس کے پاس ایسی کوئی ڈائر ی ہونے کا قیاس لگایا تھا لیکن اب تک ایسا نہیں ہوسکا ہے ۔ انکم ٹیکس کے ذرائع نے بتایا کہ وہ اب تک گول مول باتیں کررہا ہے ۔ انکم ٹیکس محکمہ نے حالانکہ اس کے دعوے کو 28نومبر کو ہی مسترد کردیا تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT