Tuesday , October 17 2017
Home / مذہبی صفحہ / احکام ِمعاش واوقاف

احکام ِمعاش واوقاف

سوال : ۱ ۔  کیافرماتے ہیں علمائے دین اس مسئلہ میں کہ معاش مشروط الخدمت یا مددمعاش یا معاش مشروط الخدمت بعنوان مددمعاش وقف ہوسکتی ہیں ؟
۲ ۔    کیاکوئی غیرمسلم مسجد کے لئے وقف کرسکتاہے  ؟
۳۔  کیاوقف کرنے کے لئے جائیداد وقف شدنی واقف کی ملک ہونا
ضروری ہے  ؟
۴۔   کیاسلطان سرکاری خزانہ سے کوئی جائیدادوقف کرسکتاہے  ؟
۵۔   ایسی سند جس کے ذریعہ مشروط الخدمت معاش یا مددمعاش عطاکی گئی ہو اور اس سندمیں وقف کا لفظ نہ لکھا گیا ہوتو کیا ایسی معاش وقف کہلائے گی  ؟  بینوا تؤجروا
جواب : ۱ ۔    معاش مشروط الخدمت یا مدد معاش وغیرہ عطیات جن کا اجراء بیت المال (سرکاری خزانہ) سے ہوا ہے وہ وقف نہیں ہوسکتے۔ وفی النہر  یعلم من قول الثانی حکم الاقطاعات من اراضی بیت المال اذ حاصلھا أن الرقبۃ لبیت المال والخراج لہ وحینئذ فلایصح بیعہ ولا ھبتہ ولاوقفہ۔ الدرالمختار برحاشیہ رد المحتار  جلد۳ ص ۴۰۹ ۔ البتہ سلطان وقت اگر کسی کو ایسی زمین کا مالک بنادے تو وہ اس معطی لہ کی ملک ہوگی اور معطی لہ اس میں مالکانہ تصرف کرتے ہوئے وقف کرنا چاہئے تو اس کو وقف کرنے کا اختیار ہوگا۔ ولو اقطعہ السلطان ارضا مواتا او ملکھا السلطان ثم اقطعھا لہ جاز وقفہ لھا۔الدرالمختارجلد ۳ ص۴۱۱  اس سے پہلے ردالمحتار میںہے فھذا یدل علی أن للامام أن یعطی الأرض من بیت المال علی وجہ التملیک لرقبتھا کما یعطی المال حیث رأی المصلحۃ اذ لافرق بین الأرض والمال فی الدفع للمستحق ۔
۲۔  کسی غیر مسلم کا مسجد کے لئے وقف کرنا شرعا باطل ہے الاسعاف فی احکام الاوقاف ص ۱۱۹ میں ہے ۔ وکذ ا لوجعل دارہ مسجدا للمسلمین أو اوصی ان یحج عنہ یکو ن الوقف باطلا لکو نہ لیس مما یتقرب بہ اھل الذمۃ الی اﷲتعالی ۔ اور تفسیر احمدی کے ص ۴۵۳ آیت ’’ ماکان للمشرکین ان یعمروا مسٰجداﷲ ‘‘ کی تفسیر میں ہے  فان اراد کافر ان یبنی مساجدا ویعمرھا یمنع منہ۔
۳۔  جائیداد وقف شدنی کا وقف کے وقت واقف کی ملک میںرہنا ضروری ہے اس کے بغیر وقف صحیح نہیں۔ فتاوی عالمگیر ی جلد ۲ ص۳۶۶ کتاب الوقف میںہے (ومنھا) الملک وقت الوقف ۔ اور  ردالمحتار  جلد ۳ ص ۵۵۵ میں ہے (قولہ وشرطہ شرط سائر التبرعات) أفاد ان الواقف لا بد ان یکو ن مالکا لہ وقت الوقف ۔
۴۔  چونکہ سرکاری خزانہ سلطان کی ملک نہیں اس لئے اسکا وقف بھی صحیح نہیں  واِنما لم یکن وقفا حقیقۃ لعدم ملک السلطان لہ۔ ردالمحتارجلد ۳ ص ۴۱۱ اور ص ۶۰۷ میں ہے  وان کانت من حق بیت المال لایصح۔
۵۔  صحت وقف کے لئے الفاظ وقف کاہونا ضروری ہے  فأمارکنہ فالالفاظ الخاصۃ الدالۃ علیہ کذا فی الکافی۔ عالمگیری جلد ۲ ص ۳۶۴ جب سندمیں وقف کالفظ نہیں ہے تو جائیداد مذکوروقف نہیںکہلائے گی ۔
فقط واﷲ تعالی أعلم

TOPPOPULARRECENT