Friday , October 20 2017
Home / شہر کی خبریں / ارکان اسمبلی و کونسل کے حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈس میں اضافہ

ارکان اسمبلی و کونسل کے حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈس میں اضافہ

دیڑھ کروڑ سے تین کروڑ مقرر ، پرنسپل سکریٹری بی پی آچاریہ کے احکامات
حیدرآباد۔/12مئی، ( سیاست نیوز) حکومت نے ارکان اسمبلی اور کونسل کے حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈز کو سالانہ دیڑھ کروڑ سے بڑھا کر 3کروڑ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سلسلہ میں پرنسپل سکریٹری بی پی آچاریہ نے آج احکامات جاری کئے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے اسمبلی اجلاس میں یہ تیقن دیا تھا جس کے مطابق آج احکامات کی اجرائی عمل میں آئی۔ حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈ میں یہ اضافہ مالیاتی سال 2016-17 سے نافذ ہوگا۔ جی او میں کہا گیا ہے کہ کئی ارکان اسمبلی اور کونسل نے چیف منسٹر سے نمائندگی کی تھی کہ حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈز کو سالانہ 3کروڑ روپئے تک اضافہ کیا جائے تاکہ عوامی ضروریات پر مشتمل مختلف کاموں کی تکمیل کی جاسکے۔ ارکان اسمبلی اور کونسل نے اس بات کی بھی خواہش کی تھی کہ ترقیاتی فنڈ کی ساری رقم صرف ان کی تجاویز کے مطابق خرچ کی جائے۔ حکومت نے اس نمائندگی کا جائزہ لیتے ہوئے حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈز کو دیڑھ کروڑ سے بڑھا کر 3کروڑ کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ اسمبلی حلقوں میں مختلف ترقیاتی کام انجام دیئے جاسکیں۔ یہ کام موجودہ رہنمایانہ خطوط کے تحت ہی انجام دیئے جائیں گے۔ حکومت نے ارکان اسمبلی اور کونسل کو اس بات کا اختیار دیا ہے کہ وہ رقم کے خرچ کیلئے تجاویز پیش کریں۔ تمام ضلع کلکٹرس کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ ارکان اسمبلی اور کونسل سے تجاویز حاصل کرتے ہوئے ترقیاتی کام انجام دیں۔ واضح رہے کہ ارکان اسمبلی اور کونسل کی جانب سے اس سلسلہ میں طویل عرصہ سے مطالبہ کیا جارہا تھا۔ ارکان نے تنخواہوں میں اضافہ کیلئے بھی چیف منسٹر سے نمائندگی کی تھی جس پر حکومت نے تنخواہوں میں اضافہ کے احکامات پہلے ہی جاری کردیئے ہیں۔ تنخواہوں میں اضافہ اور حلقہ جاتی ترقیاتی فنڈ میں اضافہ کے بعد توقع کی جاسکتی ہے کہ عوامی نمائندے بنیادی سہولتوں کی فراہمی اور ترقیاتی کاموں کی تکمیل پر توجہ مرکوز کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT