Thursday , September 21 2017
Home / دنیا / اسامہ نے بھی گاندھی جی کی طرح امریکی اشیاء کے بائیکاٹ کا اعلان کیا تھا : آڈیو ٹیپس

اسامہ نے بھی گاندھی جی کی طرح امریکی اشیاء کے بائیکاٹ کا اعلان کیا تھا : آڈیو ٹیپس

لندن ۔ 17 اگست (سیاست ڈاٹ کام) اگر اسامہ بن لادن کے کچھ پراے آڈیو ٹیپس کی سماعت کی جائے تو یہ بات معلوم ہوگی کہ ایک زمانے میں انہوں نے ہندوستان کے بابائے قوم مہاتما گاندھی کا فلسفہ بھی اپنایا تھا، جس طرح مہاتما گاندھی نے برطانوی سامراج کے تیار کردہ کپڑے اور دیگر اشیاء کے بائیکاٹ کا اعلان کیا تھا، اسی طرح اسامہ نے بھی اپنے حامیوں سے کہہ دیا تھا کہ وہ امریکی اشیاء کا قطعی استعمال نہ کریں۔ 2001ء میں امریکہ نے افغانستان پر فوج کشی کی تھی جس کے بعد اسامہ بن لادن کو قندھار چھوڑ کر فرار ہونا پڑا تھا حالانکہ وہ وہاں 1997ء سے قیام پذیر تھا۔ اسامہ کی تلاش میں ایک دو نہیں بلکہ کئی بڑے بڑے کمپاونڈس کھنگال ڈالے گئے لیکن اس کا پتہ نہیں چلا تھا جبکہ وہاں سے 1500 آڈیو کیسیٹس دستیاب ہوئے تھے جو مختلف ہاتھوں سے ہوتے ہوئے افغانستان کا ایک کیسیٹ شاپ تک پہنچ گئے اور وہاں سے سی این این کے ایک کیمرہ مین نے اسے خرید لیا۔ میساچیوسیٹس کے ولیم کالج کے ایک افغان میڈیا پراجکٹ کا حصہ بن گئے جہاں سے فلیگ ملر نامی ایک شخص کی خدمات حاصل کی گئی جو عربی زبان اور ثقافت کا ماہر تھا جس کا تعلق یونیورسٹی آف کیلیفورنیا سے تھا، کہ وہ عربی زبان میں اسامہ کی تقاریر کا ترجمہ کرے۔

TOPPOPULARRECENT