Wednesday , August 16 2017
Home / Top Stories / اسرائیلی سے مصافحہ سے انکار ،مصری اتھلیٹ وطن واپس

اسرائیلی سے مصافحہ سے انکار ،مصری اتھلیٹ وطن واپس

ریو ڈی جنیرو ، 16 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) مصر کے جوڈو فائٹر اسلام الشہابی کو جاریہ ریو اولمپکس میں اسرائیلی حریف اور ساسون سے شکست کے بعد ہاتھ ملانے سے انکار کرنے پر وطن واپس بھیج دیا گیا۔ اسرائیل کے اورساسون نے اسلام الشہابی کو پہلے مرحلے میں دو دفعہ گراتے ہوئے شکست دی تھی جس کے بعد اسرائیلی فائٹر نے ان سے مصافحہ کیلئے ہاتھ بڑھایا تو انھوں نے روایتی مصافحہ سے انکار کردیا۔ انٹرنیشنل اولمپکس کمیٹی (آئی او سی) نے مقابلے کے پہلے مرحلے میں اسرائیلی حریف سے ہاتھ ملانے سے انکار کرنے پر 34 سالہ اتھلیٹ کو سخت تنبیہ بھی کی تھی۔ آئی او سی کا کہنا ہے کہ مصری جوڈو فائٹر نے جوڈو قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اولمپکس اقدار کی توہین کی اور کھیلوں کی دنیا میں دوستی کے جذبے کو مجروح کیا ہے۔ ادھر مصری اولمپکس کمیٹی نے اسلام الشہابی کو وطن بھیجنے کی سختی سے مذمت کی ہے۔ خیال رہے کہ اتوار 14 اگست کو ریواولمپکس میں جودو کراٹے کے ایونٹ میں اسرائیلی فائٹر نے مصری حریف اسلام شہابی کو شکست سے دوچار کیا تھا۔ اسرائیلی فائٹراور ساسون نے کامیابی کے بعد اسلام الشھابی سے ہاتھ ملانے کیلئے آگے بڑھے لیکن مصری فائٹر ہاتھ ملانے سے انکار کرتے ہوئے پیچھے ہٹتے چلے گئے تھے۔ مصری فائٹر کے اس عمل پر وہاں پر موجود تماشائیوں نے بلند آواز میں ناپسندیدگی کااظہار کیا۔ واضح رہے کہ جاپانی مارشل آرٹس میں جوڈو کے میچ سے قبل اور مقابلے کے اختتام پر کھلاڑی ایک دوسرے کے سامنے سرجھکاتے ہیں یا ہاتھ ملاتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT