Wednesday , August 23 2017
Home / دنیا / اسرائیل اور ترکی کے درمیان جلدتعلقات کی بحالی

اسرائیل اور ترکی کے درمیان جلدتعلقات کی بحالی

انقرہ ۔ 8 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ترکی کی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری کئے گئے ایک بیان میں کہا گیا ہیکہ اسرائیل نے ترکی کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کیلئے پیشرفت کی ہے اور جلد ہی اس سلسلہ میں ایک معاہدہ کو بھی قطعیت دی جائے گی۔ وزارت کی جانب سے جاری کئے گئے بیان میں کہا گیا ہے لندن میں دونوں ممالک کے عہدیداروں کی ملاقات ہوئی تھی جہاں یہ فیصلہ کیا گیا کہ دونوں ممالک کے تعلقات کو ایک بار پھر معمول پر لانے کیلئے آئندہ ملاقات میں قطعیت دی جائے گی جس کا عنقریب اہتمام کیا جائے گا۔ یہاں اس بات کا تذکرہ ضروری ہیکہ اسرائیل اور ترکی کسی زمانے میں حلیف ممالک سمجھے جاتے تھے۔ تاہم 2010ء میں دونوں ممالک کے تعلقات اس وقت کشیدہ ہوگئے تھے جب اسرائیلی کمانڈوز نے غزہ جانے والے ترکی کے ایک بحری جہاز پر دھاوا کیا تھا جو امدادی سازوسامان لے جارہا تھا اور اس کے بعد اسرائیل کے خلاف وقتاً فوقتاً صدر ترکی رجب طیب اردغان کے بیانات نے بھی حالات کو مشکل تر کردیا اور تعلقات مزید کشیدہ ہوگئے تھے۔ بہرحال گذشتہ ماہ جب استنبول میں ہوئے ایک بم دھماکے میں اسرائیلی سیاح ہلاک ہوئے تھے تو اس وقت دونوں ممالک کے قائدین کی ٹیلیفون پر بات چیت ہوئی تھی۔

TOPPOPULARRECENT