Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / اسمبلی میں حکمراں پارٹی کا جارحانہ موقف

اسمبلی میں حکمراں پارٹی کا جارحانہ موقف

حیدرآباد ۔ 20 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : حکمران ٹی آر ایس اسمبلی میں جارحانہ موقف اپناتے ہوئے اپوزیشن پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کی کوشش کی اور کامیاب بھی رہی ۔ اسمبلی میں حکمران جماعت اور اپوزیشن کے درمیان بحث و تکرار عام بات ہے تاہم ٹی ار ایس نے اسمبلی کے جاریہ سیشن میں جارحانہ موقف اپناتے ہوئے اپوزیشن پر حاوی ہونے کا کوئی بھی موقع نہیں گنوایا ہے ۔ 16 دسمبر کو اسمبلی اجلاس کا آغاز ہوا ہے ۔ پہلے ہی دن چیف منسٹر کے سی آر نے قائد اپوزیشن کے جانا ریڈی اور مجلس کے فلور لیڈر اکبر الدین اویسی سے بحث و تکرار ہوگئی ۔ دوسرے دن ہفتہ کو کانگریس اور تلگو دیشم کے 11 ارکان اسمبلی کو ایک دن کے لیے معطل کردیا گیا ۔ پیر کے دن بھی اپوزیشن اور حکمران کے درمیان گینگسٹر نعیم انکاونٹر کے مسئلہ پر بحث و تکرار جاری رہی ۔ آج بھی ریاستی وزیر آئی ٹی کے ٹی آر اور قائد اپوزیشن جانا ریڈی ، ریاستی وزیر فینانس ایٹالہ راجندر اور بی جے پی کے رکن اسمبلی جی کشن ریڈی کے درمیان تھیکی بحث و تکرار ہوگئی ۔ اسمبلی اجلاس ابتداء سے آج تک حکومت نے ایجنڈے کے تحت کارروائی چلائی ہے ۔ تمام مختصر مباحث کو اسی دن مکمل کیا ہے ۔ دوسرے دن پر نہیں چھوڑا تمام حکم التواء نوٹس کو مسترد کردیا گیا ۔ وقفہ سوالات کو تقریبا مکمل کیا گیا ایک دو سوالات پر ہی بحث نہیں ہو پائی ۔ وقفہ صفر پر بھی کارروائی ہوئی ہے اور بغیر کسی رکاوٹ کے تمام بلز کو ایوان میں پیش کیا گیا ہے ۔ حکمران جماعت ایک منظم و منصوبہ بند انداز سے ایوان کی کارروائی چلا رہی ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT