Thursday , August 24 2017
Home / جرائم و حادثات / اسنیک گینگ کے 7ارکان کو عمر قید

اسنیک گینگ کے 7ارکان کو عمر قید

حیدرآباد ۔ /11 مئی (سیاست نیوز) ضلع رنگاریڈی کورٹ کے 14 ویں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ اسپیشل جج نے آج بدنام زمانہ اسنیک گینگ کے 7  ارکان کو عمر قید کی سزاء سنائی جبکہ ایک ملزم کو 20 ماہ کی سزاء سنائی ۔ فیصلے کے پیش نظر سائبر آباد پولیس نے احاطہ عدالت میں سکیورٹی کے وسیع ترین انتظامات کئے تھے اور اسنیک گینگ ٹولی کے ارکان کے رشتہ داروں نے کمشنر پولیس سائبر آباد مسٹر سی وی آنند کی گاڑی کو گھیراؤ کرنے کی ناکام کوشش کی ۔ واضح رہے کہ اگست 2014 ء میں پہاڑی شریف پولیس نے بدنام زمانہ اسنیک گینگ ٹولی موجود ہونے کا پردہ فاش کرتے ہوئے اس گینگ کے 9 ارکان بشمول سرغنہ فیصل دیانی کو گرفتار کیا تھا ۔ پولیس نے گرفتار ملزمین پر یہ الزام عائد کیا تھا کہ ایک 18 سالہ لڑکی کو /31 جولائی 2014 ء میں شاہین نگر میں واقع ایک فارم ہاؤز پر اسے جنسی ہوس کا نشانہ بنایا تھا اور اس نوجوان لڑکی کا لباس اتارنے کی انتہائی گھناؤنی حرکت کی تھی ۔ پہاڑی شریف پولیس نے اسنیک گینگ کے ارکان کے خلاف تعزیرات ہند کے دفعات 452 ، 395 ، 506 ، 354  کے تحت ایک مقدمہ درج کیا گیا تھا اور کل عدالت نے مذکورہ دفعات کے تحت ملزمین کو قصور وار پایا تھا ۔
اس کیس میں جملہ 9 ملزمین ہیں جن کے خلاف 21 گواہوں کے بیانات قلمبند کئے گئے تھے اور استغاثہ نے 38 دستاویزات شواہد کے طور پر عدالت میں پیش کئے گئے تھے ۔ 14 ویں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ اسپیشل جج مسٹر ورا پرساد نے اسنیک گینگ کے 7 ارکان فیصل دیانی ، بدر بارکبا، سید باسلامہ ، محمد پرویز ، سید انور ، احمد اور محمد ابراہیم کو عمر قید کی سزاء سنائی جبکہ اس کیس کے 8 ویں ملزم علی باقر کو تعزیرات ہند کے دفعہ 411 کے تحت 20 ماہ کی سزاء سنائی ۔ جج نے فیصلہ سنانے سے قبل ملزمین سے اپنی فریاد پیش کرنے کی اجازت دی جس میں اسنیک گینگ کے ارکان نے اپنے بے قصور ہونے کا دعویٰ کیا ۔ لیکن جج نے یہ صاف طور پر کھلی عدالت میں بتایا کہ ان پر عائد کئے گئے الزامات سنگین ہے اور انتہائی گھناؤنے ہیں جن کے پیش نظر انہیں عمر قید کی سزاء سنانے کا اعلان کیا ۔ عدالت کے فیصلے کے بعد فیصل دیانی اور اس کے ساتھی اپنے ہاتھوں میں پلے کارڈس لیکر بے قصور ہونے اور انہیں انصاف نہ ملنے کے نعرے لگائے ۔

TOPPOPULARRECENT