Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / اسکولس میں زائد فیس وصولی ‘عثمانیہ یونیورسٹی طلباء کا احتجاج

اسکولس میں زائد فیس وصولی ‘عثمانیہ یونیورسٹی طلباء کا احتجاج

حیدرآباد ۔ 21 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : سرکاری احکامات کی خلاف ورزی کرتے ہوئے زائد فیس وصول کرنے والوں کے خلاف عثمانیہ یونیورسٹی طلبہ نے احتجاج کا آغاز کردیا ہے ۔ خانگی اسکولس میں ڈونیشن اور زائد فیس کے علاوہ اسکولس میں کتابوں ، یونیفام اور دیگر اشیاء کی خریداری اور شرائط کے خلاف اسکولس انتظامیہ پر برہم طلبہ آج ایک خانگی اسکول میں داخل ہوگئے اور زبردست احتجاج کیا ۔ عوام سے زائد فیس وصول کرنے پر برہم عثمانیہ یونیورسٹی جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے طلبہ اور قانون کے طلبہ اس احتجاج میں شریک تھے ۔ جنہوں نے سیتاپھل منڈی میں واقع سری چیتنیہ اسکول پر حملہ کردیا ۔ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے طلبہ نے بتایا کہ انہیں اطلاع تھی کہ اس اسکول میں زائد فیس کے علاوہ یونیفام اور کتابیں بھی فروخت کی جارہی ہیں ۔ طلبہ کے اس اچانک احتجاج سے علاقہ میں سنسنی پھیل گئی ۔ اور پولیس کی بھاری جمعیت اس خانگی اسکول پہونچ گئی تاہم پولیس نے طلبہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے احتجاج کو دیکھتے ہوئے احتیاطی طور پر انہیں حراست میں لے لیا ۔ مسٹر اشوک ریڈی انسپکٹر عثمانیہ یونیورسٹی پولیس اسٹیشن نے یہ بات بتائی ۔ طلبہ نے جو شدید برہم تھے حکومت اور انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری طور پر اقدامات کرتے ہوئے زائد فیس وصول کرنے والوں کے خلاف کارروائی کرے ۔ بصورت دیگر احتجاج میں مزید شدت پیدا کی جائیگی ۔

TOPPOPULARRECENT