Friday , August 18 2017
Home / کھیل کی خبریں / اظہر اور یونس کی ذمہ دارانہ بیٹنگ، فالوآن کا خطرہ برقرار

اظہر اور یونس کی ذمہ دارانہ بیٹنگ، فالوآن کا خطرہ برقرار

Pakistan's batsman Younis Khan plays a shot against Australia past pigeons during the second day of the third cricket Test match at the SCG in Sydney on January 4, 2017. / AFP / William WEST / -- IMAGE RESTRICTED TO EDITORIAL USE - STRICTLY NO COMMERCIAL USE -- (Photo credit should read WILLIAM WEST/AFP/Getty Images)

سڈنی ٹسٹ میں آسٹریلیا کا 538/8 پر ڈیکلریشن ۔ رینشا نے 184 رنز بنائے ۔ پاکستان جوابی اننگز میں 126/2

سڈنی ، 4 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان نے آسٹریلیا کے خلاف سڈنی ٹسٹ کے دوسرے دن اپنی پہلی اننگز میں 126 رنز بنائے تھے اور اس کے دو کھلاڑی آؤٹ ہوئے تھے۔ پاکستان کو فالوآن سے بچنے کیلئے اب بھی 213 رنز درکار ہیں۔ اس سے قبل آسٹریلیا نے پہلی اننگز 538 رنز 8 کھلاڑی آؤٹ پر ڈکلیئر کردی۔ پیٹر ہینڈس کومب نے بھی ڈیوڈ وارنر اور میٹ رینشا کے نقش قدم پر چلتے ہوئے سنچری اسکور کی۔ آسٹریلیا نے پہلی اننگز 365 رنز تین کھلاڑی آؤٹ پر شروع کی اور میٹ رینشا اور پیٹر ہینڈس کومب نے چوتھی وکٹ کی شراکت میں 142 رنز کا اضافہ کیا۔ 20 سالہ میٹ رینشا بیس چوکوں کی مدد سے 184 رنز کی شاندار اننگز کھیل کر عمران خان کی گیند پر بولڈ ہوئے۔ اپنا پہلا ٹسٹ کھیلنے والے ہلٹن کارٹ رائٹ بھی37 رنز بناکر عمران خان کی گیند پر بولڈ ہوئے۔ پیٹر ہینڈس کومب نے اپنی دوسری ٹسٹ سنچری 195 گیندوں پر نو چوکوں کی مدد سے مکمل کی۔ انھوں نے اس سے قبل برسبین ٹسٹ میں بھی سنچری بنائی تھی۔ ہینڈس کومب 110 رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر ہٹ وکٹ ہوئے۔ پارٹ ٹائم بولر اظہرعلی، میتھیو ویڈ اور مچل اسٹارک کی وکٹیں حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے۔ ان کی بولنگ پر یونس خان نے سلپ میں کارٹ رائٹ کا کیچ بھی ڈراپ کیا۔ پاکستانی بولنگ ایک بار پھر بکھری بکھری دکھائی دی۔ وہاب ریاض تین وکٹوں کے ساتھ سب سے کامیاب بولر رہے لیکن محمد عامر کو اس اننگز میں کوئی وکٹ نہ مل سکی۔ ملبورن ٹسٹ میں بھی وہ کسی بیٹسمن کو آؤٹ کرنے میں کامیاب نہیں ہوسکے تھے۔ یاسر شاہ اور عمران خان کی گیندوں پر رنز کی سنچریاں مکمل ہوئیں۔ پاکستان کی پہلی اننگز کا آغاز انتہائی مایوس کن رہا اور چوتھے ہی اوور میں ہیزل ووڈ نے دو جھٹکے پہنچائے۔ انھوں نے اپنا پہلا ٹسٹ کھیلنے والے شرجیل خان کو صرف چار رنز پر رینشا کے ہاتھوں کیچ کرایا اور چار گیندیں بعد بابراعظم کو صفر پر ایل بی ڈبلیو کردیا۔ اس سیریز میں پاکستان کے سب سے کامیاب بیٹسمن اظہرعلی ایک بار پھر ثابت قدمی سے ڈٹے نظر آئے اور وہ یونس خان کے ساتھ تیسری وکٹ کی شراکت میں 120 رنز کا اضافہ کرچکے ہیں۔ اظہرعلی کو اس وقت ایک موقع ملا جب ناتھن لیون کی گیند پر لیگ سلپ میں ڈیوڈ وارنر 51 رنز پر ان کا کیچ لینے میں ناکام رہے۔ یونس خان اس سیریز میں دوسری نصف سنچری مکمل کرنے میں کامیاب ہوئے ہیں۔ اظہرعلی آسٹریلیائی سرزمین پر ٹسٹ سیریزمیں کسی بھی پاکستانی بیٹسمین کے سب سے زیادہ 390 رنز کے محسن خان کا ریکارڈ توڑنے کیلئے اب صرف 9 رنز دور ہیں۔

TOPPOPULARRECENT