Friday , August 18 2017
Home / شہر کی خبریں / اعلی پولیس عہدیداروں کے تیقنات بے اثر

اعلی پولیس عہدیداروں کے تیقنات بے اثر

بڑے جانوروں کی منتقلی پر ایک شخص پر حملہ ‘ جانور چھین لئے گئے
حیدرآباد ۔ 20 ؍ ستمبر ( سیاست نیوز) بڑے جانوروں کی بلاخلل منتقلی اوراشرار کی جانب سے پھیلائی جانے والی شرپسندی کے خلاف پولیس کا انتباہ بے اثر ثابت ہو رہا ہے ۔بعض معاملات میں پولیس کے بعض ملازمین بھی شرپسندوں کی درپردہ مدد کر رہے ہیں۔ ایک واقعہ میں بیلوں اور بکروں کو منتقل کرنے والے ایک شخص کوچمپا پیٹ سعیدآباد میں نشانہ بنایا گیا جس میں تین بڑے جانور چھین لئے گئے ۔ بتایا جاتا ہے کہ محمد عبدالسلیم اپنے فرزند محمد عبدالکلیم کے ساتھ نلگنڈہ کے مالے پلی سے آٹو ٹرالی میں بکرے اور تین بیل منتقل کر رہے تھے ۔ حیدرآباد پہنچنے تک پانچ چیک پوسٹوں پر پولیس نے ان کی تلاشی لی ۔ چمپا پیٹ روڈ پر خود پولیس نے انہیں راستہ بدلنے کا مشورہ دیا اور جب سرورنگر سے سعیدآباد میں داخل ہوئے 50 اشرار پر مشتمل ایک ٹولی نے محمد سلیم کی آٹو ٹرالی کو روک دیا اور انہیں زدوکوب کیا گیا اور بعدازاں ان کے تین بیل بھی چھین لیئے گئے ۔ اشرار کی جانب سے اس حملہ کی اطلاع ملنے پر مجلس بچاؤ تحریک کے سابق کارپوریٹر مسٹر امجد اللہ خان خالد نے سعیدآباد پولیس اسٹیشن پہنچ کر حملہ میں ملوث اشرار کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ۔ ایڈیشنل انسپکٹر مسٹر ناگیشورراؤ نے محمد عبدالسلیم کی شکایت حاصل کرلی ۔ تحقیقات جاری ہیں۔ واضح رہے کہ پولیس یہ دعوی کر رہی ہے کہ بیلوں کی منتقلی کیلئے کوئی سرٹیفکیٹ لازم نہیں ہے اور شرپسند عناصر کے خلاف سخت کاررائی کا انتباہ دیا ہے لیکن پولیس کی موجودگی میں اشرار کی ٹولی قانون کو ہاتھ میں لیتے ہوئے حملہ میں ملوث ہونے کا تشویش کا باعث ہے ۔

TOPPOPULARRECENT