Monday , October 23 2017
Home / Top Stories / افریقہ دنیا کا تیز رفتار ترقی پذیر خطہ

افریقہ دنیا کا تیز رفتار ترقی پذیر خطہ

والد کے آبائی وطن کینیا کے دورہ پر فخر : اوباما
نیروبی ۔25 جولائی ۔(سیاست ڈاٹ کام) امریکہ کے صدر براک اوباما نے آج کہا کہ کینیا میں منعقدہ تجارتی چوٹی کانفرنس میں مقامی صنعتکاروں کے جذبہ کی ستائش کرتے ہوئے آج کہاکہ افریقہ تیزی سے آگے بڑھ رہا ہے ۔ صدر امریکہ کے عہدہ پر فائز ہونے کے بعد اوباما اپنے والد کے وطن کینیا کا یہ پہلا دورہ کررہے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ ’’میں یہاں آنا چاہتا تھا کیونکہ افریقہ تیزی سے آگے بڑھ رہا ہے ۔ افریقہ دنیا کا تیز رفتار ترین ترقی پذیر خطہ ہے ‘‘۔ صدر اوباما نے مزید کہاکہ ’’عوام غریبی کی سطح سے اوپر اُٹھ رہے ہیں ۔ آمدنی میں اضافہ ہورہا ہے۔ اوسط طبقہ بڑھ اُبھر رہا ہے۔ آپ جیسے نوجوان افریقی طرز تجارت میں تبدیلی لانے کیلئے ٹکنالوجی استعمال کررہے ہیں‘‘ ۔ امریکی سفارتخانہ نے دہشت گردوں کے خطرات کے پیش نظر یہاں چوٹی کانفرنس کے انعقاد کے خلاف خبردار کیا تھا لیکن کینیا کے صدر اویورو کنیاٹا نے کہاکہ اس کانفرنس نے بالعموم میڈیا میں ظاہر کئے جانے والے واقعات کے برعکس افریقہ کی ایک مختلف جھلک کی عکاسی کی ہے ۔ صدر کنیاٹا نے کہاکہ ’’اب اُنھیں یہ دیکھنے دیجئے کہ افریقہ ایک فراخدل اور کشادہ خطہ ہے جو تجارت کیلئے تیار ہے‘‘۔ اوباما جمعہ کو یہاں پہونچے تھے ۔ انھوں نے کہا تھا کہ ’’یہ نہایت خوشی کی بات ہے کہ میں کینیا واپس آیا ہوں۔ مجھے فخر ہے کہ میں امریکہ کا پہلا صدر ہوں جو کینیا کا دورہ کررہا ہوں اور ظاہر ہے کہ اس میں میرا ایک شخصی پہلو بھی ہے کہ میرے والد دنیا کے اس مقام سے آئے تھے ‘‘ ۔ اوباما جو حقہ نوشی کے عادی تھے ایک ممتاز ماہر معاشیات بھی تھے اور اوباما اپنے والد کے وسیلہ سے کینیا میں موجود اوباما خاندان سے اپنا نسب مربوط کرتے ہیں۔ اوباما نے اعتراف کیا کہ وہ اپنے والد کو کبھی بھی نہیں جانتے تھے کیونکہ اوباما سینئر 1982 ء کے دوران نیروبی میں کار کے ایک حادثہ میں ہلاک ہوگئے تھے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT