Thursday , September 21 2017
Home / Top Stories / اقلیت، دلت اور پسماندہ طبقات کے اتحاد کی کوششوں کو ہمیشہ نقصان

اقلیت، دلت اور پسماندہ طبقات کے اتحاد کی کوششوں کو ہمیشہ نقصان

Ranchi: RJD supremo Lalu Prasad Yadav arrives to appear before a special CBI court in Ranchi on Thursday in connection with the multi-crore fodder scam case. PTI Photo (PTI7_27_2017_000075A)

نتیش نے سیاہ داغ دھونے کیلئے ہی نئے ڈیٹرجنٹ کا استعمال شروع کیا، آر ایس ایس کی گود میں کھیلنے والے لیڈر: لالو پرساد
پٹنہ، 02 اگست (سیاست ڈاٹ کام) راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے صدر لالو پرساد یادو نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار کے خلاف حملہ جاری رکھتے ہوئے کہا کہ جب بھی ملک میں اقلیت، دلت اور پسماندہ طبقات کو متحد کرنے کی کوششیں ہوئیں مسٹر کمار نے ہمیشہ اسے پارہ پارہ کرنے کی ہی کوشش کی ہے ۔مسٹر یادو نے آج سوشل نیٹ ورکنگ سائٹ فیس بک پر پوسٹ کیا ہے کہ جب پورے ملک میں منڈل (پسماندہ) کی سیاست عروج پر تھی اور بہار میں ان کی اور اترپردیش میں مسٹر ملائم سنگھ اور آنجہانی کانشی رام کی حکومت تھی۔ تب صدیوں سے ستائے ہوئے ، محروم طبقات، نظرانداز کئے گئے افراد، دلت، اقلیت اور پچھڑوں کا اتحاد انتہا پر تھا، تمام لوگ ایک دوسرے کے درد کے پارٹنر بن کر ایک ہی ہار کے خوبصورت موتی بن رہے تھے ۔ اس دور میں اپنی تنگ ذہنیت اور انتہائی بلندہونے کے خواب کی وجہ سے مسٹر نتیش کمار ان طبقات کے مفادات کو بالائے طاق رکھ کر راشٹریہ سویم سیوک (آر ایس ایس) کی گود میں جا کر کھیلنے والے پہلے پسماندہ لیڈر تھے ۔ آر جے ڈی سربراہ نے کہا کہ بابری مسجد منہدم کرنے کے بعد جب لال کرشن اڈوانی ملک بھر میں گھوم رہے تھے تب نتیش کمار 1994 میں بمبئی میں مسٹر اڈوانی کا ہاتھ اپنے ہاتھ میں لے کر اتحاد کا مظاہرہ کر رہے تھے ۔ یادو نے کہا، “آج پھر 2017 میں جب اقلیت، دلت اور پسماندہ طبقات کو متحد کرکے ہم ملک اور بابا صاحب کا آئین بچانے کی کوشش کر رہے تھے تب یہ پلٹورام ہمارے اتحاد کو دھتکار کر پھر اپنے آقاؤں کی گود میں کھیلنے چلے گئے ۔ “انہوں نے کہا کہ مسٹر کمار دلتوں، پچھڑوں کے سب سے بڑے دشمن ہیں۔ نتیش کمار سب سے بڑے موقع پرست اور غدار ہیں۔

سب کو ان سے سنبھل کررہنے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ لوگ یہ نہ بھولیں کہ مسٹر کمار اپنے مفاد کے لئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو بھی چھوڑ چکے ہیں۔ اس دوران مسٹر یادو نے جنتا دل یونائٹیڈ (جے ڈی یو) کے سینئر لیڈر شرد یادو کو اپنی حمایت میں لانے کی کوششیں تیز کر دی ہیں۔ مسٹر یادو نے مسٹر شرد یادو کی پرانی تصویر فیس بک اور ٹوئٹر پر پوسٹ کی ہے جس میں مسٹر شرد یادو ہسپتال میں شریک نظر آ رہے ہیں اور مسٹر لالو پرساد یادو ان کا حال چال پوچھتے دکھائی دے رہے ہیں۔ آر جے ڈی سربراہ نے پوچھا ، ’’نتیش بتاؤ منڈل کمیشن لاگو کرانے میں تمہارا کیا رول تھا۔ ہم نے اور شرد یادو نے اس کے لئے جدوجہد کی۔ ہم دونوں نے منڈل کمیشن لاگو کرانے کے لئے کیا کیا کیا تم کیا جانتے ہو۔‘‘ آر جے ڈی کے صدر لالو پرساد یادو نے بدعنوانی کے معاملے میں نرمی نہ برتنے کا دعوی کرنے والے وزیر اعلی نتیش کمار کو ایک بار پھر حملہ کا نشانہ بناتے ہوئے آج کہا کہ نتیش کمار نے سیاہ داغ دھونے کے لئے ہی آزمائے ہوئے ڈیٹرجنٹ کا استعمال کرنا شروع کیا ہے ۔ لالویادو نے ایسوسی ایشن فار ڈیموکریٹک ریفارمس (اے ڈی آر) کی رپورٹ میں ریاست کی نئی حکومت میں 75 فیصد سے زیادہ وزراء کے خلاف مجرمانہ مقدمات درج ہونے کا حوالہ دیتے ہوئے ٹوئٹر پر اپنے خاص انداز میں لکھا، ’’سیاہ داغ دھونے کے لئے ہی توآزمائے ہوئے ڈیٹرجنٹ کا استعمال کرنا شروع کیا ہے ۔‘‘ لالو یادو کی ٹویٹس پر ریاست کے سابق ڈپٹی چیف منسٹر تیجسوی یادو نے جوابی ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا، ’’انہیں داغ اچھے لگتے ہیں اور داغیوں سے پرانا گہرا رشتہ ہے ۔ بے داغ تصویر اگلے صف میں بیٹھے یہ کیسے ہضم ہوگی۔‘‘

Top Stories

TOPPOPULARRECENT