Thursday , August 24 2017
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی اقامتی اسکولس کا دو مرحلوں میں آغاز

اقلیتی اقامتی اسکولس کا دو مرحلوں میں آغاز

ضلعی عہدیداروں کے ساتھ اجلاس، شفیع اللہ کا خطاب
حیدرآباد۔/18جون، ( سیاست نیوز) اقلیتی اقامتی اسکولس کی سوسائٹی نے دو مرحلوں میں اقامتی اسکولس کے آغاز کا فیصلہ کیا ہے۔ پہلے مرحلہ کے تحت پیر تک 25اسکولوں میں انفراسٹرکچر کی فراہمی اور فرنیچر کی سربراہی کو یقینی بنایا جائے گا۔ جس کے بعد اسکولوں کے افتتاح کی تاریخ طئے کی جائے گی۔ سوسائٹی کے نائب صدر نشین اے کے خاں کی ہدایت پر سکریٹری سوسائٹی شفیع اللہ نے آج اسٹیٹ آفیسرس اور تمام اضلاع کے عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس منعقد کیا جس میں اسکولوں میں انفراسٹرکچر سہولتوں کی تکمیل کا جائزہ لیا گیا۔ اسٹیٹ آفیسرس میں پروفیسر ایس اے شکور، محمد اسد اللہ، معصومہ بیگم، بی وکٹر نے شرکت کی۔ ان کے علاوہ تمام اضلاع کے ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسرس، ایکزیکیٹو ڈائرکٹرس کارپوریشن اور سوسائٹی سے وابستہ عہدیدار شریک تھے۔ ہر ضلع میں اسکولوں کی تیاری کا جائزہ لیتے ہوئے پہلے مرحلہ میں کم از کم 25اسکولوں کے آغاز کا فیصلہ کیا گیا اور ہر ضلع میں ایسی عمارتوں کی نشاندہی کی گئی جہاں صرف فرنیچر کی سربراہی سے اسکول کا آغاز کیا جاسکتا ہے۔ عہدیداروں سے کہا گیاکہ وہ پیر تک تمام درکار فرنیچر، بستر اور دیگر سہولتوں کی سربراہی کو یقینی بنائیں۔ بعد میں ان اسکولوں کے افتتاح کی تاریخ طئے کی جائے گی اور متعلقہ وزراء اور ارکان اسمبلی کو مدعو کرتے ہوئے افتتاح عمل میں آئے گا۔ 25اسکولوں کے آغاز کے بعد دوسرے مرحلہ کے اسکولوں کو قطعیت دی جائے گی۔ حکومت نے 71اقامتی اسکولس کے قیام کا فیصلہ کیا تھا تاہم بعض عمارتوں میں تعمیری کام باقی رہنے اور کئی عمارتوں میں انفراسٹرکچر کی عدم سربراہی کے سبب تاخیر ہورہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT