Wednesday , August 23 2017
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کی اسکیمات میں بروکرس کے رول کو ختم کرنے کی ہدایت

اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کی اسکیمات میں بروکرس کے رول کو ختم کرنے کی ہدایت

بروکرس کی حرکت پر ڈائرکٹرس کے خلاف کارروائی کا انتباہ ، چیرمین کارپوریشن سید اکبر حسین
حیدرآباد۔22 مارچ (سیاست نیوز) صدرنشین اقلیتی مالیاتی کارپوریشن سید اکبر حسین نے کارپوریشن کی اسکیمات میں بروکرس کے رول کو ختم کرنے کی سختی سے ہدایت دی اور کہا کہ جس دفتر میں بروکرس کو متحرک دیکھا جائے گا وہاں کے متعلقہ اگزیکٹیو ڈائرکٹر کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔ حیدرآباد کے ای ڈی آفس واقع گن فائونڈری میں بڑے پیمانے پر بروکرس کی موجودگی کی اطلاع پر صدرنشین کارپوریشن خود اچانک وہاں پہنچ گئے تاہم ان کے پہنچنے سے قبل اطلاع ملنے پر بروکرس رفوچکر ہوچکے تھے۔ صدرنشین نے اس معاملہ میں مشیر اقلیتی امور اے کے خان سے تعاون کی خواہش کی اور اینٹی کرپشن بیورو کے عہدیداروں کو متحرک کرنے کی درخواست کی۔ سید اکبر حسین نے کارپوریشن کے عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس منعقد کیا جس میں سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل اور منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن بی شفیع اللہ اور دیگر عہدیدار شریک تھے۔ انہوں نے کارپوریشن کی اسکیمات کے بارے میں تازہ ترین موقف کی تفصیلات حاصل کیں اس کے علاوہ مستقل اور عارضی ملازمین کے بارے میں بھی تفصیلات داخل کرنے کی ہدایت دی ہے۔ انہوں نے کارپوریشن کے عہدیداروں اور ملازمین پر واضح کردیا کہ ڈسپلین کو بہرصورت برقرار رکھنا ہوگا اور کوئی بھی 10:45 کے بعد دفتر پہنچتا ہے تو وہ اس دن کی رخصت حاصل کرلے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی اسکیمات میں کسی بھی کوتاہی کو برداشت نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے ملازمین سے کہا کہ وہ عوام کے ساتھ خوش اسلوبی کے ساتھ پیش آئیں اور مسائل کی یکسوئی کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے عہدیداروں اور ملازمین کو ہدایت دی کہ وہ جب تک دفتر میں موجود رہیں اس وقت تک تمام دستیاب رہیں۔ صرف خواتین کو شام 5 بجے گھر جانے کی اجازت رہے گی۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے بھی ڈسپلین کی پابندی کا مشورہ دیا۔ انہوں نے کارپوریشن کی اسکیمات میں درمیانی افراد کے رول کو ختم کرنے کی ضرورت ظاہر کی اور کہا کہ درمیانی افراد کے سبب حقیقی مستحق افراد اسکیمات کے فوائد سے محروم ہورہے ہیں۔ صدرنشین نے کہا کہ وہ کارپوریشن کی تمام اسکیمات پر موثر عمل آوری کو یقینی بنائیں گے اور پرانے شہر حیدرآباد کے غریب اقلیتی خاندانوں کی معاشی ترقی کے لیے نئی اسکیمات تیار کی جائیں گی۔ سید اکبر حسین نے کہا کہ بہت جلد تمام ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسرس اور ایگزیکٹیو ڈائرکٹرس کا اجلاس طلب کیا جائے گا جس میں ہر ضلع کے لیے کارکردگی سے متعلق نشانہ مقرر ہوگا۔ درگاہ حضرت خواجہ معین الدین چشتیؒ پر حاضری کے لیے سید اکبر حسین جمعرات کو اجمیر روانہ ہورہے ہیں۔ وہ اجمیر میں حیدرآبادی رباط کے قیام کیلئے کسی موزوں مقام پر اراضی کی نشاندہی کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT