Tuesday , September 26 2017
Home / دنیا / اقوام متحدہ کی سوچی سے راکھین اسٹیٹ کا دورہ کرنے کی اپیل

اقوام متحدہ کی سوچی سے راکھین اسٹیٹ کا دورہ کرنے کی اپیل

ینگون ۔ 9 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) اقوام متحدہ نے میانمار کی مقبول ترین قائد آنگ سان سوچی سے کہا ہیکہ موصوفہ راکھین اسٹیٹ کا دورہ ضرور کریں جہاں یہ کہا جارہا ہیکہ فوج مبینہ طور پر روہنگیا مسلمانوں کے خلاف ظلم و ستم جاری رکھے ہوئے ہے اور ان پر مظالم ڈھائے جارہے ہیں۔ یاد رہیکہ آنگ سان سوچی جنہیں امن کے نوبل انعام سے بھی نوازا جاچکا ہے، کو اس وقت بین الاقوامی تنقیدں کا سامنا ہے کیونکہ راکھین اسٹیٹ میں وہ فوج کے مظالم کو روکنے میں ناکام رہی  ہیں جس کی وجہ سے زائد از 20,000 روہنگیا مسلمان سرحد پار کرکے بنگلہ دیش جانے پر مجبور ہوگئے کیونکہ روہنگیا مسلمان خواتین کی اجتماعی عصمت ریزی کی جارہی ہے، مردوں اور بچوں کو قتل کیا جارہا ہے اور مکانات کو آگ لگا دی جارہی ہے۔ اکٹوبر میں پولیس چوکیوں پر کئے گئے خونریز دھاوؤں کے ردعمل کے طور پر اب روہنگیا مسلمانوں کو نشانہ بنایا جارہا ہے۔ ملائشیا نے میانمار پر الزام عائد کیا ہیکہ وہ مسلمانوں کی منظم طریقہ پر نسل کشی کررہا ہے جس کی میانمار نے تردید کی ہے۔ دوسری طرف حیرت انگیز طور پر سوچی نے حالات کو قابو میں  بتایا تھااور بین الاقوامی برادری سے کہا تھاکہ وہ اشتعال انگیز بیانات دینے سے گریز کریں۔ نیویارک میں جاری کئے گئے کل ایک بیان میں میانمار کیلئے اقوام متحدہ کے خصوصی مشیر وجے نمبیار نے راست طور پر سوچی سے درخواست کی تھی کہ وہ راکھین اسٹیٹ کا دورہ کرتے ہوئے وہاں کے حالات خود اپنی آنکھوں سے دیکھیں اور انہیں روکنے کی کوشش کریں۔

TOPPOPULARRECENT