Saturday , August 19 2017
Home / پاکستان / القاعدہ کے 5عسکریت پسند پاکستان میں ہلاک

القاعدہ کے 5عسکریت پسند پاکستان میں ہلاک

لاہور۔11اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) خوفناک دہشت گرد تنظیم القاعدہ کے پانچ ارکان جو سمجھا جاتا ہے کہ پاکستان کے صوبائے پنجاب کے سینئر وزیر کے قتل میں ملوث تھے ۔ پولیس کے ساتھ ایک انکاؤنٹر میںہلاک کردیئے گئے ۔ عہدیداروں کے بموجب نفاذ قانون محکموں میں پانچ افراد بشمول ایک تربیت یافتہ نشانہ باز کو شیخوپورہ ضلع صوبہ پاکستانی پنجاب میں ہلاک کردیا ۔ پنجاب پولیس کے انسداد دہشت گردی محکمہ کے بموجب القاعدہ کے پانچ ارکان عمر فاروق ( تربیت یافتہ نشانہ باز ) ‘ قاری نوید ‘ سید روحیل ‘ عمران اور کاشف کو پولیس کمانڈوز نے کل گولی مار کر ہلاک کردیا ۔ پنجاب کی پولیس کے ایک ذریعہ کے بموجب دہشت گرد وزیرداخلہ پاکستانی پنجاب شجاع خان زادہ کے قتل میں بھی ملوث تھے ۔ قبل ازیں پولیس نے مبینہ چار تحریک طالبان ارکان اور لشکر جہانگوی  ارکان کو شجاع کے قتل کے الزام میں گرفتار کیا تھا ۔ اگست میں شجاع پر خودکش حملہ کرک ے انہیں قتل کردیا گیا تھا ۔ پولیس پارٹی جیسے ہی ضلع شیخوپورہ پہنچی کم از کم سات عسکریت پسندوں نے فائرنگ کا آغاز کردیا ۔ وہ غالباً کاشف کی کوشش تھی ‘ پولیس کمانڈوز اور سی آئی ڈی ارکان عملہ نے جوابی فائرنگ کی جس میں پانچ دہشت گرد ہلاک ہوگئے ۔ دیگر چند حملہ آور تاریکی کا فائدہ اٹھاکر فرار ہونے میںکامیاب ہوگئے ۔ القاعدہ کے تربیت یافتہ نشانہ باز اعلیٰ سطحی فرقہ وارانہ ہلاکتوں میں بھی ملوث تھے ۔ ان کا نام پنجاب سی آئی ڈی کی سرخ کتاب میں 110 انتہائی مطلوب دہشت گردوں کی فہرست میں شامل تھا ۔

TOPPOPULARRECENT