Thursday , October 19 2017
Home / شہر کی خبریں / اللہ نے چاہا تو عنقریب مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات

اللہ نے چاہا تو عنقریب مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات

میں زاہد بھائی کا مشکور ہوں : کے سی آر

قاضی پیٹ ۔ /9 اکٹوبر (سیاست نیوز) ورنگل میں بھدرا کالی مندر جانے کے موقع پرپریس کانفرنس میں جہاں چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے ریاست تلنگانہ بالخصوص ضلع ورنگل میں روبعمل اسکیمات اور آئندہ کے ترقیاتی پروگراموں کے منصوبہ جات کے بارے میں تفصیل سے میڈیا کو واقف کروایا ۔ وہیں نمائندہ سیاست شاہ نواز بیگ کے ایک سوال پر چیف منسٹر نے کہا کہ ’’میں زاہد بھائی ‘‘ (ایڈیٹر سیاست) کا مشکور ہوں جن کی نمائندگی پر بی سی کمیشن کے قیام کی منظوری دی گئی ہے ۔ اللہ نے چاہا تو جلد سے جلد مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات حاصل ہوں گے ۔ چیف منسٹر کے اس تیقن کے بعد ایسا لگتا ہے کہ وہ مسلمانوں کی ترقی کیلئے کافی سنجیدہ ہیں اور امید ہے کہ وہ 12 فیصد تحفظات فراہم کرتے ہوئے نہ صرف اپنے وعدہ کی تکمیل کریں گے بلکہ ملک میں ایک مثال قائم کریں گے ۔ اگر واقعی میں چیف منسٹر نے 12 فیصد تحفظات فراہم کیا تو یہ ان کا قابل فخر کارنامہ ہوگا جو ٹی آر ایس کو مزید مستحکم کرے گا اور آئندہ مرتبہ بھی بغیر کسی مخالفت کے اسے اقتدار حاصل ہوگا ، اور سب سے بڑی بات یہ کہ مسلمانوں کی پسماندگی کا خاتمہ ہوگا ۔ سینکڑوں ، ہزاروں بچوں کی زندگی تابناک بن جائے گی اور سب کی دعائیں چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ کو ملیں گی ۔ امید ہے کہ چیف منسٹر انصاف کی طرف حکمت و تدبر کے ساتھ مزید پیش قدمی کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT