Thursday , August 17 2017
Home / شہر کی خبریں / امراض قلب کے مریضوں کو اسٹنٹ کے ضمن فکر مند نہ ہونے کا مشورہ

امراض قلب کے مریضوں کو اسٹنٹ کے ضمن فکر مند نہ ہونے کا مشورہ

حکومت سے رعایتی قیمت پر آلہ کی فراہمی ، ڈاکٹر لکشما ریڈی وزیر صحت کا بیان
حیدرآباد ۔ 15۔ مارچ (سیاست نیوز) وزیر صحت ڈاکٹر لکشما ریڈی نے کہا کہ امراض قلب سے متعلق اسٹنٹ (Stent) کے سلسلہ میں عوام کو فکرمند ہونے کی ضرورت نہیں ہے ۔ حکومت کی جانب سے رعایتی قیمت پر معیاری اسٹنٹ فراہم کئے جائیں گے۔ وقفہ سوالات کے دوران وزیر صحت نے کہا کہ امراض قلب سے متعلق اسٹنٹ کے سلسلہ میں مختلف بے قاعدگیوں پر قابو پانے کیلئے حکومت نے اقدامات کئے ہیں۔ خانگی دواخانوں اور دیگر اداروں کی جانب سے اسٹنٹ کی من مانی قیمت وصول کرنے کی شکایات ملی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جو بھی ادارے اس طرح کی سرگرمیوں میں ملوث ہوں گے ، ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ اسٹنٹ کی قیمت میں من مانی اضافہ اور وصولی کو روکنے کیلئے دواخانوں کا اچانک معائنہ کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ تاحال 30 دواخانوں کا معائنہ کیا گیا اور اسٹنٹ کی قیمت کے بارے  میں  معلومات کی گئی ۔ وزیر صحت نے کہا کہ سابق حکومتوں کے دور میں دواخانوں پر کوئی کنٹرول نہیں تھا اور اسٹنٹ کی قیمت من مانی وصول کی جارہی تھی ۔ ٹی آر ایس حکومت نے اسٹنٹ کی قیمت پر قابو پانے کے اقدامات کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دواخانوں کو اس بات کی ہدایت دی گئی ہے کہ وہ ضرورت کے بغیر سرجری نہ کریں۔ تلنگانہ میڈیکل کونسل نے اس طرح کی شکایات پر 9 دواخانوں کے خلاف کارروائی کی ہے۔ انہوں نے انتباہ دیا کہ ایسے دواخانوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی جو غیر ضروری طور پر سرجری کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ نمس میں طبی سہولتوں کو بہتر بنانے اور عصری بنانے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ حیدرآباد کے نمس کی طرز پر ریاست میں مزید تین ہاسپٹل قائم کئے جائیں گے ۔ لکشما ریڈی نے اس بات کی تردید کی کہ کارپوریٹ اور خانگی دواخانے قلب کے مریضوں پر اسٹنٹ سرجری کے لئے اصرار کر رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ نیشنل فارماسیوٹیکل پرائزنگ اتھاریٹی حکومت ہند نے اسٹنٹ کی قیمت کا تعین کردیا ہے۔ ڈرگ کنٹرول اتھاریٹی حکومت تلنگانہ قیمتوں پر نگرانی کر رہی ہے ۔ وزیر صحت  نے کہا کہ ریاست میں ہر سال مختلف امراض سے تین لاکھ افراد کی موت واقع ہورہی ہے ۔ اس میں 50 فیصد اموات امراض قلب سے ہونے کی اطلاعات حقائق سے بعید ہیں۔ کانگریس کے ڈپٹی لیڈر جیون ریڈی نے نمس میں سہولتوں میں اضافہ اور بیڈس کی تعداد بڑھانے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ اکثر و بیشتر مریضوں کو نمس میں واپس کیا جارہا ہے ۔ وزیر صحت نے بستروں کی تعداد میں اضافہ کا تیقن دیا۔ ایس سمپت کمار اور ڈاکٹر جی چنا ریڈی دونوں کانگریسی ارکان نے سرکاری دواخانوں میں طبی سہولتوں کی کمی کی شکایت کی ۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت کو اس سلسلہ میں فوری توجہ دینی چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT