Thursday , August 17 2017
Home / دنیا / امریکہ اور حلیف ممالک پر حملوں کی خواہش

امریکہ اور حلیف ممالک پر حملوں کی خواہش

جہادیو ں سے اسامہ کے فرزند حمزہ کی امریکہ ‘برطانیہ ‘ فرانس اور ڈنمارک کو تباہ کردینے کی اپیل

واشنگٹن ۔16اگست ( سیاست ڈاٹ کام ) اسامہ بن لادن کے حمزہ جنہیں دہشت گردی کا ولیھد شہزادہ بھی کہا جاتا ہے ‘ القاعدہ کے حامیوں سے خواہش کررہے ہیں کہ جھنڈ سے بچھڑے ہوئے بھیڑیئے کی طرح امریکہ اور اس کے حلیف ممالک میں حملے کریں ۔ القاعدہ کے مقتول سربراہ کے فرزند جن کی عمر 20سے 30سال کے درمیان ہیں کہا کہ القاعدہ کے حامیوں کو واشنگٹن ڈی سی ‘ پیرس اور تل ابیب میں حملے کرنے چاہیئے ۔ انہ کے ایک ویڈیو پیغام میں حمزہ بن لادن نے کہاکہ یہ تمہارا فرض ہے ۔ انہوں نے مشرق وسطیٰ سے جہاد کرنے کی اپیل کی ۔ علاوہ ازیں امریکہ کے حلیف ممالک اور یہودی امریکیوں پر بھی حملوں کی خواہش کی ۔ ایس آئی ٹی ای سراغ رسانی گروپ کے بموجب القاعدہ کو امید ہے کہ اُس کی مقبولیت بن لادن کی علامت کے ساتھ دوبارہ عروج پرآئے گی ۔ ایس آئی ٹی ای کے کارگذار ڈائرکٹر ریٹا کیٹز نے کہا کہ انتہا پسند گروپس حمزہ کو مستقبل کے قائد کی شکل میں دیکھتا ہے ۔ جن سے القاعدہ کے ارکان کو محبت ہے اور وہ اُن سے تحریک حاصل کرتے ہیں ۔ وہ نیک نام بھی ہیں

اور خانہ جنگی میں بھی حصہ لیتے ہیں ۔ 11ستمبر کے حملے کے بعد اُن کی جو تصویریں شائع کی گئی تھیں ان میں وہ بالغ عسکریت پسندوں کو نظمیں پڑھ کر سناتے ہوئے دکھائے گئے تھے ۔ وہ امریکی بحریہ سیل کے دھاوے سے بچ نکلے جس میں پاکستان کی عمارت میں 2011ء میں اسامہ قتل کردیئے گئے تھے ۔ بچوں جیسے چہرے والے دہشت گرد نے ایک ویڈیو فلم جون میں تیار کی ہے جس میں انہوں نے عہد کیا کہ طالبان کے مرحوم قائد ملا عمر کے وفادار رہیں گے ۔ روزنامہ ’’ نیویارک ‘‘ نے اس کی خبر شائع کی ہے ۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ حمزہ بن لادن نے دولت اسلامیہ کا نام تک نہیں لیا جس میں اسلامی انتہا پسند دنیا بھر سے شامل ہورہے ہیں اور جس نے عراق اور شام میں خلافت کا اعلان کردیا ہے ۔حمزہ بن لادن نے جہادی محاذوں اور ان کے قائدین کا جو دنیا بھر میںموجود ہیں تذکرہ کیا لیکن دولت اسلامیہ اور اسکے قائدین کا کوئی تذکرہ نہیں ہے ۔ حمزہ بن لادن نے اپنے ویڈیو پیغام میں ایک نظم پڑھی جس میں امریکہ ‘ برطانیہ ‘ فرانس ‘ ڈنمارک کو تباہ کردینے کی اپیل کی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT