Thursday , August 24 2017
Home / دنیا / امریکہ مزید نئے شامی باغیوں کو تربیت نہیں دے گا

امریکہ مزید نئے شامی باغیوں کو تربیت نہیں دے گا

واشنگٹن ۔10 اکٹوبر۔ (سیاست ڈاٹ کام)امریکہ نے شام میں شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ سے لڑنے کیلئے  نئے باغیوں کی تربیت اور انھیں اسلحہ اور دیگر سازوسامان کی فراہمی کا سلسلہ ترک کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔امریکی حکام کا کہنا ہے کہ اب اسلحہ اور دیگر سازوسامان انھی باغیوں کو فراہم کیا جائے گا جو پہلے سے برسرِپیکار ہیں۔اس پروگرام کے تحت شام میں نئے باغیوں کو اسلحہ اور تربیت دینے پر 50 کروڑ ڈالر خرچ کئے جا رہے تھے اور اس کا نشانہ رواں برس 5400 اور 2016 میں مزید 15 ہزار باغیوں کی تربیت تھا۔گذشتہ ماہ امریکی جنرل لائیڈ آسٹن نے تسلیم کیا تھا کہ یہ منصوبہ مکمل طور پر ناکام ہو گیا ہے اور اب امریکی تربیت یافتہ باغیوں میں سے صرف چار یا پانچ افراد ہی لڑ رہے ہیں۔ان کے اس اعتراف کے چند دن بعد یہ خبر سامنے آئی تھی کہ دوسرے گروپ کے تربیت یافتہ باغیوں نے محفوظ راستہ پانے کیلئے اپنے ہتھیار اور گاڑیاں جبل النصرہ کے ہی شدت پسندوں کے حوالے کردی تھیں۔اس تربیتی پروگرام سے وابستہ ایک اعلیٰ عہدیدار نے کہا ہے کہ اس منصوبے کو ’روکا‘ جا رہا ہے تاہم مستقبل میں اسے دوبارہ شروع کیا جا سکتا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ’پروگرام قابلِ ذکر مشکلات کا شکار رہا ہے۔ بھرتی کے معاملے میں ہمارا معیار بہت بلند تھا‘۔ عہدیدار نے یہ بھی بتایا کہ امریکہ اب بھرتی ہونے والی ہر فرد کی چھان بین نہیں کرے گا اور یہ عمل ان گروپوں کے رہنماؤں تک محدود رہے گا جن کے ساتھ وہ کام کرنا چاہے گا اور ان رہنماؤں کو سخت چھان بین کا سامنا کرنا پڑے گا۔امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے امریکی وزراتِ دفاع کے ذرائع کے حوالے کہا ہے کہ امریکہ اب مزید شامی باغیوں کو اردن، قطر، سعودی عرب یا متحدہ عرب امارات میں تربیت دینے کے لیے بھرتی نہیں کرے گا۔
برطانیہ میں ہندوستانی نژاد خاتون کا مشتبہ قتل
لندن۔ 10 اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) برطانیہ میں ایک 44 سالہ ہندوستانی نژاد خاتون اپنے مکان میں مردہ پائی گئی ۔ اسکاٹ لینڈ یارڈ کو شبہ ہے کہ کسی ایسے شخص نے یہ کارروائی کی جس کا اس خاتون سے آن لائن ربط ہوا تھا۔ اوشا پٹیل نامی یہ خاتون نارتھ ویسٹ لندن میں واقع کرکل ووڈ فلیٹ میں مردہ پائی گئی۔ وہ اپنے 5 سالہ بیٹے کے ساتھ یہاں مقیم تھی۔ میٹرو پولیٹن پولیس نے بتایا کہ انہیں 34 سالہ مائیلس ڈونلی کی تلاش ہے۔ وہ ایک سفید فام شخص ہے جس کا قد 5′-11″ ہے اور تحقیقاتی عہدیدار یہ بھی معلوم کررہے ہیں کہ اوشا پٹیل کو کن حالات میں قتل کیا گیا۔فوری طور پر قتل کی وجوہات کا پتہ نہیں چل سکا لیکن اوشا کے پڑوسیوں کا کہنا ہے کہ وہ اس فلیٹ میں تقریباً 9 سال سے قیام پذیر تھی۔

TOPPOPULARRECENT