Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / امریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم 271ہندوستانیوں کی فہرست حوالے

امریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم 271ہندوستانیوں کی فہرست حوالے

ہندوستان کا قبول کرنے سے انکار، امریکہ کا دعویٰ مسترد، وزیر خارجہ سشما سوراج کی وضاحت

نئی دہلی۔/23مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) امریکہ نے 271 ہندوستانیوں کی فہرست حکومت ہند کے حوالے کرتے ہوئے یہ دعویٰ کیا ہے کہ یہ شہری امریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم ہیں، حکومت ہند نے امریکہ کے اس دعویٰ کو قبول نہیں کیا اور کہا کہ وہ اس فہرست کو مسترد کردیتا ہے۔ ان ہندوستانیوں کی امریکہ سے اخراج کی اجازت اس وقت دی جائے گی جب حکومت ہند ان کے تعلق سے پوری طرح مناسب طور پر تصدیق نہیں کرلیتی۔ مرکزی وزیر خارجہ سشما سوراج نے کہا کہ ہم نے امریکہ کے اس دعویٰ کو قبول نہیں کیا ہے اور نہ ہی اس فہرست کو حاصل کیا ہے بلکہ ہم نے مزید تفصیلات طلب کی ہیں۔ ہم نے امریکہ سے کہا ہے کہ اس کے دعویٰ کے بارے میں تفصیلات کی توثیق و تصدیق کے بعد ہی ان کے اخراج کی اجازت دی جائے گی اور ہم ان کے اخراج کیلئے ہنگامی سرٹیفکیٹ بھی جاری کرسکتے ہیں۔ راجیہ سبھا میں وقفہ صفر کے دوران ارکان کی تشویش کا جواب دیتے ہوئے سشما سوراج نے کہا کہ یہ کہنا درست نہیں ہوگا کہ ٹرمپ نظم و نسق کے اقتدار پر آنے کے بعد امریکہ کی پالیسیوں میں تبدیلی آئی ہے، راجیہ سبھا میں کئی ارکان نے یہ تشویش ظاہر کی تھی کہ امریکہ میں ڈونالڈ ٹرمپ کے نظم ونسق کو اقتدار ملنے کے بعد ہندوستانی شہریوں کو مشکلات کا سامنا ہے جس میں ہندوستان کے ماہرین پروفیشنلس جو امریکہ میں مقیم ہیں پریشان ہیں۔ سشما سوراج نے ارکان کی تشویش کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ کے اقتدار پر آنے کے بعد امریکہ کی پالیسیوں میں تبدیلی نہیں آئی ہے۔ انہوں نے امریکہ میں مقیم ماہرینورکرس کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ پروفیشنلس کیلئے H1B اور L1 ویزا کو منسوخ کرنے کیلئے بل امریکی کانگریس کے پاس بھیج دیا گیا ہے۔

ان بلوں میں 4 بل امریکی کانگریس کے پاس ہے جس کو ابھی منظور ہیں کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت امریکہ کے ساتھ بات چیت کررہی ہے۔ اعلیٰ سطح پر مذاکرات جاری رکھتے ہوئے اس بات کو یقینی بنایا جارہا ہے کہ ہندوستانی عوام کے مفادات کو یقینی بنایا جائے یا آئی ٹی صنعت کو کوئی دھکہ نہ پہنچے۔ امریکہ میں مقیم آئی ٹی پروفیشنلس کا خاص خیال رکھا جارہا ہے۔ ہم نے امریکی حکام کو واقف کروایا ہے کہ آئی ٹی پروفیشنلس امرکہ میں روزگار نہیں چھین رہے ہیں بلکہ امریکی معیشت میں ان کا بڑا تعاون ہے۔ امریکہ کو مزید مضبوط بنانے میں یہ ہندوستانی آئی ٹی پروفیشنلس کا اہم رول رہا ہے۔ کانگریس رکن آنند شرما نے سشما سوراج کو جلد صحت یاب ہونے پر نیک خواہشات کا اظہار کیا اور کہا کہ یہ خیال رکھنا ضروری ہے کہ امریکہ میں مقیم آئی ٹی ہندوستانی پروفیشنلس کو کوئی مشکل پیش نہ آئے اور انھیں غیر قانونی تارکین وطن متصور نہ کیا جائے۔اس پر سشما سوراج نے جواب دیا کہ میں نے قبل ازیں بھی کہا تھا کہ چند بلوں کو امرکہ میں پیش کیا گیا ہے لیکن حکومت نے اس بات کی کوشش کی ہے کہ ان بلوں کو اس شکل میں منظور نہ کیا جائے جس سے تارکین وطن کے لئے نقصاندہ ہو، انہوں نے کہا کہ معتمد خارجہ نے امریکی کانگریس ارکان سے ملاقات کی ہے۔ ان تمام نے ہندوستانیوں کی ستائش کی ہے۔ امریکہ میں غیر قانونی طور پر مقیم ہندوستانیوں کے بارے میں کوئی مصدقہ تعداد نہیں پائی جاتی حکومت ان ہندوستانیوں کو صرف اس وقت سفری سرٹیفکیٹ جاری کرتی ہے جب ان کے بارے میں تفصیلات کا علم ہوتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT