Tuesday , October 24 2017
Home / مضامین / امریکہ میں یونانی ادویات کی مقبولیت آئندہ سال شکاگو میں بین الاقوامی کانفرنس

امریکہ میں یونانی ادویات کی مقبولیت آئندہ سال شکاگو میں بین الاقوامی کانفرنس

حکیم سید غوث الدین
جناب سید حسین خوندمیری بانی و سی ای او حکما، ہربل لیابس امریکہ نے کہا کہ آئندہ سال کے اوائل میں شکاگو امریکہ میں ایک بین الاقوامی کانفرنس منعقد ہوگی جس میں جڑی بوٹیوں سے  تیار کردہ ادویات یونانی اور ایورویدک کو مقبول عام بنانے کیلئے مارکیٹنگ کے امکانات کا جائزہ لیا جائے گا ۔ جناب خوندمیری نے ایک خصوصی انٹرویو میں بتایا کہ مجوزہ کانفرنس میں ہندوستان کی نامور یونانی اور ایورویدک کمپنیوں کے سربراہوں اور نمائندوں کو مدعو کیا جارہا ہے ۔ کانفرنس میں ہندوستان میں تیار کردہ ادویات کو امریکہ کے معیار پر لانے اور عوام میں مقبول عام کرنے کے سلسلہ میں ایک واضح اور جامع لائحہ عمل تیار کیا جائے گا ۔ جناب سید حسین خوندمیری نے جو گزشتہ تیس برسوں سے امریکہ میں مقیم ہیں۔ امریکہ میں ہربل لیابس 21 فروری 2015 ء کو قائم کیا جس کا افتتاح ڈاکٹر اوصاف سعید کونسل جنرل انڈیا متعینہ شکاگو امریکہ کے ہاتھوں عمل میں آیا ۔ جناب خوندمیری کے خاندان میں کئی اطلباء ، پیدا ہوئے جو شب و روز خدمت خلق میں مصروف ہیں۔ اس افتتاحی تقریب میں جناب افتخار شریف سی ای او نیشنل بینک کارڈ کارپوریشن اور دیگر معززین نے شرکت کی ۔ حکما ہربل لیابس نے امریکہ میں Pro Heart Fusion سے موسوم دوا تیار کی جو صحتمند دل اور دل کی خرابیوں دونوں میں ہربل سپلیمنٹ کے طور پر ایجاد کی ۔ اس دوا کا رجسٹریشن امریکہ میں منظور کیا گیا اور وہاں فروخت کیلئے لائسنس بھی جاری کیا گیا ۔ یہ دوا نہ صرف امریکہ کی کئی ریاستوں بلکہ دیگر ملکوں میں بھی آن لائین رجسٹریشن کے ذریعہ سربراہ کی جارہی ہیں، اس دوا کی مقبولیت میں اضافہ ہوتا جارہا ہے ۔ جناب سید حسین خوندمیری شکاگو امریکہ میں بین الاقوامی کانفرنس کے سلسلہ میں دہلی ہندوستان میں جناب انیل گیز والا جوائنٹ  سکریٹری منسٹری آف آیوش حکومت ہند سے ملاقات کرتے ہوئے اپنی تجویز ان کے سامنے پیش کی اور محکمہ آیوش کی جانب سے تعاون کرنے کی خواہش کا اظہار کیا جس پر جناب انیل گیز والا نے کہا کہ حکومت ہند ایورویدک ، یونانی اور یوگا کو عام کرنے کیلئے پورا تعاون کرے گی ۔ محکمہ آیوش حکومت ہند اسی تجویز سے اتفاق کرتے ہوئے مکمل تعاون کرنے کا وعدہ کیا اور اس سلسلہ میں دہلی میں میٹنگ ان کی صدارت میں منعقد کی گئی جس میں پروفیسر رئیس الرحمن مشیر یونانی حکومت ہند و ڈائرکٹر جنرل سنٹرل کونسل فار ریسرچ آف یونانی میڈیسن دہلی ، ڈاکٹر غزالہ جاوید انٹرنیشنل کوآرڈینیٹر منسٹری آف آیوش، ڈاکٹر ام الفضل موظف ڈائرکٹر سی سی آریویم دہلی ، جناب حامد احمد ڈائرکٹر ہمدرد لیباریٹریز دہلی ، جناب محمد شعیب اکرم مینجنگ ڈائرکٹر ایکس ریمنڈز دہلی ، جناب سید ناصر الدین وقار مشیر حکما، ہربل لیابس یو ایس اے بھی موجود تھے ۔ اجلاس میں طئے پایا کہ امریکہ میں انٹرنیشنل کانفرنس سے قبل ہندوستان میں ایک کانفرنس محکمہ آیوش کی جانب سے منعقد کی جائے گی جس میں یونانی، ایورویدک کے فارمیسوں کے ذمہ داروں اور ریسرچ آفیسرس کو مدعو کیا جائے گا اور کانفرنس میں یونانی اور ایورویدک کمپنیوں کو اچھے اور معیاری دواؤں کو برآمد اور درآمد کے سلسلہ میں غور و خوض کرتے ہوئے تیاری ادویہ پر معیار مقرر کیا جائے گا ۔ جناب خوندمیری دہلی کی میٹنگ میں شرکت کرنے کے بعد حیدرآباد میں ڈاکٹر منور حسین کاظمی ڈائرکٹر سنٹرل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ آف یونانی میڈیسن حیدراباد ، ڈاکٹر ایم اے وحید سابق ڈائرکٹر سنٹرل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ آف یونانی میڈیسن حیدرآباد جناب محمد مسیح الدین فاروقی مینجنگ ڈائرکٹر کارخانہ زندہ طلسمات حیدرآباد ، جناب زاہد علی خاں ایڈیٹر روزنامہ سیاست ، جناب ظہیر الدین علی خاں مینجنگ ایڈیٹر روزنامہ سیاست ، جناب عامر علی خاں نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست ، حکیم سید غوث الدین سابق مشیر یونانی حکومت آندھراپردیش کے علاوہ ڈاکٹر ایم اے واجد موظف ڈپٹی ڈائرکٹر سنٹرل کونسل فار ریسرچ ان یونانی میڈیسن سرینگر سے ملاقات کرتے ہوئے امریکہ میں آیوش کی دواؤں خاص طور پر یونانی کی معیاری دواوں کو نہ صرف امریکہ بلکہ دنیا کے مختلف ممالک میں عام کرنے کیلئے ان سے مکمل تعاون و سرپرستی کرنے کی خواہش ظاہر کی ۔ ان شخصیتوں نے اپنے مکمل تعاون اور رہنمائی کا تیقن دیا ۔ جناب سید حسین خوندمیری نے کہا کہ ان کی فارمیسی کو جناب سید ناصر الدین وقار مشیر حکما، ہربل یو ایس اے کی سرپرستی اور رہنمائی شامل ہے اور وہ ہربل میڈیسن کو نہ صرف امریکہ بلکہ دنیا کے مختلف ممالک میں عام کرنے کیلئے کوشاں ہیں۔ چنانچہ سب سے پہلے انہوں نے ہندوستان کی مشہور یونانی اور ایورویدک کمپنیوں کے ساتھ دواؤں کو عام کرنے کیلئے تجارتی سطح پر سمینار اور سمپوزیم ہندوستان کے مختلف ریاستوں بلکہ امریکہ کے مختلف مقامات پر منعقد کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ ہندوستان میں محکمہ آیوش حکومت ہند کے تعاون سے بین الاقوامی طبی کانفرنس رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ اس سلسلہ میں ہند۔امریکی تعاون و اشتراک سے یونانی اور ایورویدک دواؤں کو فروغ حاصل ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT