Saturday , August 19 2017
Home / Top Stories / امریکہ میں 9 مرتبہ کراٹے کنگ فو چمپین شپ جیتنے والے پٹھان جمیل خاں انصاف کے طلبگار

امریکہ میں 9 مرتبہ کراٹے کنگ فو چمپین شپ جیتنے والے پٹھان جمیل خاں انصاف کے طلبگار

حیدرآباد۔ 20 ڈسمبر (نمائندہ خصوصی) ’’میں پندرہ برسوں سے مسلسل سرکاری ملازمتوں کی کوشش کررہا ہوں۔ چیف منسٹر اور وزراء کے دفاتر کے چکر کاٹتے کاٹتے میری چپلیں گِھس گئیں۔ متحدہ آندھرا پردیش کے چیف منسٹرس چندرا بابو نائیڈو، ڈاکٹر وائی ایس راج شیکھر ریڈی، کرن کمار ریڈی اور کے روشیا کے دور میں بار بار نمائندگی کی لیکن کوئی فائدہ نہیں ہوا۔ علیحدہ تلنگانہ کی تشکیل کے بعد اُمید تھی کہ چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ مجھ سے انصاف کریں گے لیکن ایسا نہیں ہوا، اس کے باوجود میں پورے جوش و خروش کے ساتھ اپنے ملک اور ریاست کا نام روشن کررہا ہوں۔ ان خیالات کا اظہار نیشنل اور انٹرنیشنل کراٹے کنگ فو چمپین پٹھان، جمیل خاں نے راقم الحروف سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے گزشتہ ماہ یعنی نومبر میں امریکہ میں منعقد شدنی کراٹے ٹورنمنٹ آف چمپینس میں ہندوستان کی نمائندگی کرتے ہوئے 4 زمروں میں ایک گولڈ، ایک سلور اور 2 برانز میڈلس حاصل کئے۔  پٹھان، جمیل خاں ولد پٹھان، امیر خاں نے آج دفتر سیاست پہنچ کر ایڈیٹر سیاست جناب زاہد علی خاں اور نیوز ایڈیٹر سیاست جناب عامر علی خاں سے ملاقات کی اور انہیں امریکہ میں حاصل ہوئیں کامیابیوں سے واقف کروایا۔ جناب زاہد علی خاں نے جمیل خاں کی ستائش کرتے ہوئے ان کی ممکنہ حوصلہ افزائی کا تیقن دیا۔ جمیل خاں نے ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ 22 نومبر کو نیویارک کے کوئنس کالج میں اس چمپین شپ کا انعقاد عمل میں آیا جس میں 15 ملکوں کے 800 کھلاڑیوں نے حصہ لیا۔ بلیک بیلٹ 40 تا 49 عمر کے سینئر گروپ کے چاروں زمروں اسپارنگ، ویپن کڈا، ووڈ بریکنگ اور مری ہینڈ کڈا میں حصہ لے کر انہوں نے بالترتیب گولڈ، سلور، برانز میڈلس حاصل کئے۔ جمیل خاں نے جو اسپارک کنگ فو اکیڈیمی بھی چلاتے ہیں۔ شہر میں لڑکیوں کو کنگ فو سکھا رہے ہیں۔ صفدریہ گرلز ہائی اسکول ہمایوں نگر میں بھی وہ لڑکیوں کو یہ فن سکھاتے ہیں۔ دلچسپی اور حیرت کی بات یہ ہے کہ امریکہ میں ہوئی چمپین شپ میں انہوں نے 9 مرتبہ شرکت کرکے 12 گولڈ، 11 سلور اور 12 برانز میڈلس ہندوستان کو دلائے جبکہ ہندوستان میں ہوئے مقابلوں میں وہ اب تک 25 گولڈ  اور 12 سلور میڈلس حاصل کرچکے ہیں۔ جمیل خاں کو سری لنکا، بنگلہ دیش، ملائیشیا اور بینکاک میں ہندوستان کی نمائندگی کا اعزاز حاصل ہوا ہے لیکن افسوس کہ کنگ فو کے اس ماہر کھلاڑی کو جس نے ساری دنیا میں ہندوستان اور ریاست تلنگانہ کا نام روشن کیا، ہنوز سرکاری ملازمت سے محروم رکھا گیا ہے۔ وہ اپنی بوڑھی والدہ اور غریب بھائیوں کے ساتھ مراد نگر میں ایک کرایہ کے گھر میں مقیم ہیں۔ حکومت اور سرکاری اداروں کو اس عظیم کھلاڑی کی بدحالی اور کسمپرسی نظر نہیں آئی۔ چیف منسٹر کے سی آر اور ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی سے بھی انہوں نے ملاقات کی لیکن دونوں نے اس غریب کھلاڑی کو صرف دلاسہ دے کر ٹال دیا۔ اس سوال پر کہ وہ غربت کے باوجود 9 مرتبہ امریکہ اور دوسرے ملک کیسے گئے؟ پٹھان جمیل خاں نے بتایا کہ مختلف ہمدردوں اور خانگی اداروں سے عطیات جمع کرکے وہ اپنے سفر کا انتظام کرلیتے ہیں۔ اس مرتبہ سٹی ہائیٹس پرائیویٹ لمیٹیڈ کے ظہیر احمد نے انہیں اسپانسر کیا تھا۔ پٹھان جمیل خاں کے مطابق ان کی ضعیف والدہ مہرالنساء بیگم ہر نماز میں ان کیلئے دعاگو رہتی ہیں۔ وہ چاہتی ہیں کہ ان کے بیٹے کو سرکاری ملازمت مل جائے اور رہنے کیلئے چھوٹا سا ذاتی گھر کا انتظام ہوجائے۔ شاید ماں کی دعاؤں سے جمیل خاں پٹھان کی دِلی مرادیں پوری ہوں اور وہ سرکاری ملازمت حاصل کرنے میں کامیاب ہوجائیں۔

TOPPOPULARRECENT