Wednesday , June 28 2017
Home / Top Stories / امیت شاہ کی ادھو ٹھاکرے سے ملاقات ‘ تائید کی درخواست

امیت شاہ کی ادھو ٹھاکرے سے ملاقات ‘ تائید کی درخواست

صدارتی امیدوار کے نام کا پہلے اعلان کرنے بی جے پی سے شیوسینا کا مطالبہ
ممبئی ۔18جون ( سیاست ڈاٹ کام ) صدارتی انتخابات میں حلیفوں کی تائید کو یقینی بنانے بی جے پی کی مسائل کے ایک حصہ کے طور پر حکمراں جماعت کے صدر امیت شاہ نے آج ممبئی میں شیوسینا کے سربراہ اودھو ٹھاکرے سے بند کمرے میں بات چیت کی ۔ شیوسینا کے ذرائع کے مطابق شاہ نے ٹھاکرے سے کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی اعلیٰ ترین دستوری عہدہ کیلئے این ڈی اے امیدوار کے بارے میں کوئی فیصلہ کریں گے ‘ جس پر شیوسینا کے سربراہ نے کہا کہ صدر کیلئے بی جے پی کی طرف سے اپنے پسند کی انکشاف کے بعد ہی ٹھاکرے کسی امیدوار کی تائید کے بارے میں اپنے فیصلہ کا اعلان کریں گے ۔ امیت شاہ نے مہاراشٹرا کے چیف منسٹر دیویندر فرنویز کے ساتھ ٹھاکرے کی رہائش گاہ ’ ماتوشری‘ پر بند کمرے میں بات چیت کی ۔ یہ بات چیت 10بجے دن شروع ہوئی تقریباً 75منٹ تک جاری رہی ۔ بی جے پی کی ریاستی یونٹ کے سربراہ راؤ صاحب دانوے جو ٹھاکرے کی رہائش گاہ پہنچے تھے ان کے علاوہ شیوسینا کے سینئر رکن پارلیمنٹ سنجے راوت بھی وہاں موجود تھے لیکن بات چیت میں یہ دونوں قائدین شامل نہیں کئے گئے تھے ۔ ذرائع کے مطابق ٹھاکرے سے ملاقات کے دوران شاہ نے اپیل کی کہ صدارتی عہدہ کیلئے شیوسینا کی جانب سے بی جے پی کی تائید کی جائے ۔تاہم ٹھاکرے نے کہا کہ وہ 17جولائی کو ہونے والے صدارتی انتخابات میں کسی کی تائید سے قبل حکمراں جماعت کے امیدوار کا نام جاننا چاہتے ہیں ۔ ذرائع نے کہا کہ امیت شاہ نے ٹھاکرے کو بتایا کہ نریندر مودی اس امیدوار کا اعلان کریں گے اور ہمیں اُمید ہے کہ شیوسینا کی تائید حاصل ہوگی ۔ تاہم ادھو ٹھاکرے نے امیت شاہ سے اصرار کے ساتھ کہا کہ اُن کی پارٹی ( بی جے پی ) کو پہلے اپنے امیدوار کے نام کا اعلان کرنا چاہیئے جس کے بعد ہی شیوسینا تائید کے بارے میں کوئی فیصلہ کرے گی ۔ بی جے پی صدارتی انتخابات کیلئے نہ صرف اپنے حلیفوں بلکہ اپوزیشن جماعتوں سے بھی تائید حاصل کرنے کی کوششوں میں مصروف ہے۔ بی جے پی کی تین رکنی ٹیم نے حال ہی میں کانگریس کی صدر سونیا گاندھی سے بھی ملاقات کی تھی اور کانگریس نے بھی پہلے بی جے پی امیدوار کے اعلان پر اصرار کیا تھا ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT