Tuesday , August 22 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اناج کی خریدی کیلئے حکومت کے ٹھوس اقدامات

اناج کی خریدی کیلئے حکومت کے ٹھوس اقدامات


اے گریڈ دھان کیلئے 1450 روپئے ادائیگی، ضلع کلکٹر نظام آباد کا خطاب
نظام آباد:18؍ اکتوبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع کلکٹر ڈاکٹر یوگیتا رانا نے بتایا کہ کسانوں کے اناج کو اقل ترین قیمت کے حصول کیلئے حکومت کی جانب سے قائم کردہ خریدی مراکز پر اپنے اناج کو فروخت کرتے ہوئے اقل ترین قیمت حاصل کریں تو بہتر ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ ضلع میں مکئی، دھان، کپاس و دیگر اناج کی خریدی کیلئے حکومت کی جانب سے خریدی مراکز قائم کئے گئے ہیں۔ ناکافی بارش کی وجہ سے کئی مشکلات کا سامنا کرتے ہوئے کسانوں نے کاشت کی ہے اور ان کے اناج کو اقل ترین قیمت کی ادائیگی کیلئے حکومت اقدامات کرتے ہوئے دھان کے 285 خریدی مراکز قائم کئے گئے اور 16؍ اکتوبر سے ان مراکز کا قیام عمل میں لایا گیا ہے۔انجمن امدادی باہمی اداروں کے ذریعہ 240 مراکز ڈی آرڈی اے کے ذریعہ 45 خریدی مراکز قائم کئے گئے ہیں۔ اقل ترین قیمت 1410 روپئے قائم کئے گئے ہے۔ اے گریڈ کے دھان کو 1450 روپئے تک قیمت ادا کی جائے گی۔ 48 گھنٹوں میں آن لائن کے ذریعہ بینکوں میں رقم جمع کی جائے گی۔ کسانوں کے اناج کی ولیج ریونیو آفیسر جانچ کرتے ہوئے سرٹیفکٹ کے ذریعہ حاصل کرنے اور بینک کھاتہ کے زیراکس کسان اپنے ساتھ لانے کی خواہش کی۔ 17 فیصد تک دھان میں نمی ہونی چاہئے اور صاف ستھرا دھان لاتے ہوئے اقل ترین قیمت حاصل کرنے کی خواہش کی ۔ مکئی کی  خریدی انجمن امدادی باہمی اداروں کے ذریعہ کی جارہی ہے اور 26 خریدی مراکز قائم کئے گئے ہیں اور ڈی سی ایم ایس کے ذریعہ ایک مرکزقائم کیا گیا ہے ۔ مارکفائیڈ کے ذریعہ مکئی کی خریدی کی جارہی ہے اور اب تک 8 مراکز قائم کئے گئے ہیںاور 4330 کنٹل مکئی خریدی گئی اور مکئی اقل ترین قیمت 1325 رکھی گئی ہے اور مکئی میں 14 فیصد تک نمی ہونی چاہئے اور صاف ستھری مکئی لانے اور اسی طرح کپاس کی خریدی کیلئے 25؍ اکتوبر کے بعد مدنور میں سی سی آئی کے ذریعہ خریدی مراکز قائم کئے جائیں گے اور 23,500 کپاس کے کسانوں کو شناختی کارڈ جاری کئے گئے ہیں۔ شناختی کارڈ یافتہ کسانوں کی کپاس ہی خریدی جائے گی اگر کسی کے پاس شناختی کارڈ نہ ہونے کی صورت میں متعلقہ تحصیلدار سے ربط پیدا کریں اور کپاس کے معیار کے مطابق کم از کم 3800 اور زیادہ سے زیادہ 4100 روپئے اقل ترین قیمت رکھی گئی ہے اور حکومت کی جانب سے قائم کردہ خریدی مراکز 48 گھنٹوں میں آن لائن کے ذریعہ قیمت ادا کی جائے گی۔ لہذا کسان حکومت کی جانب سے قائم شدہ مراکز پر ہی اپنے اناج کو فروخت کریں تو بہتر ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT