Sunday , June 25 2017
Home / شہر کی خبریں / انتہائی پسماندہ طبقات کیلئے علحدہ کارپوریشن

انتہائی پسماندہ طبقات کیلئے علحدہ کارپوریشن

1000 کروڑ روپئے کی تخصیص ، بجٹ میں حکومت کے مختلف اقدام
حیدرآباد۔14مارچ(سیاست نیوز) ریاست میں حکومت کی جانب سے چلائی جانے والی بہبود کی اسکیمات سے استفادہ کیلئے انتہائی پسماندہ طبقات کے لئے علحدہ کارپوریشن ’موسٹ بیاک ورڈ کلاسس کارپوریشن ‘ کے قیام اور اس کے لئے 1000 کروڑ کی تخصیص کا فیصلہ کیا گیا ہے اور اسی طرح برہمن سنکشیما پریشد کے نام سے سطح غربت سے نیچے زندگی گذارنے والے برہمنوں کیلئے علحدہ 100کروڑ کی تخصیص کے ساتھ علحدہ ادارہ کا قیام عمل میں لایا گیا ہے۔ اس ادارہ کو غریب و مستحق لڑکیوں کی شادی کیلئے حکومت کی جانب سے فراہم کی جانے والی امداد کی حوالگی کی ذمہ داری تفویض کی گئی ہے ۔ برہمنوں کیلئے قائم کئے گئے پریشد کے ذریعہ کلیان لکشمی اسکیم کے ذریعہ رقومات کی اجرائی عمل میں لائی جائے گی۔ علاوہ ازیں انتہائی پسماندہ طبقات کے لئے قائم کردہ 88بھیڑوں کی تقسیم کے علاوہ مچھلی کی افزائش وغیرہ کے لئے دیگر اسکیمات روبعمل لائی جائیگی۔ان اسکیمات سے استفادہ کیلئے حد آمدنی 2لاکھ روپئے مقرر کی گئی ہے اور اس میں کوئی اضافہ کے امکانات نہیں ہیں کیونکہ حکومت نے منصوبوں کے ساتھ ہی دیہی و شہری آمدنی کی حد مقرر کرتے ہوئے فیصلہ کرلیا ہے۔ حکومت کے فیصلہ کے مطابق ان اسکیمات سے استفادہ حاصل کرنیو الے شہری استفادہ کنندگان کی حد آمدنی سالانہ 2لاکھ سے متجاوز نہیں ہونی چاہئے جبکہ دیہی علاقو ںمیں یہ حد آمدنی 1.5لاکھ رکھی گئی ہے۔حکومت نے انتہائی پسماندہ طبقات کی بہبود اور برہمنوں کی بہبود کیلئے دو علحدہ ادارے قائم کرتے ہوئے کئی منصوبہ تیار کئے ہیں جن میں یادو‘ مچھوارے اور دیگر طبقات کے لئے اسکیمات موجود ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT