Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / انحراف کو روکنے قانون سازی پر زور

انحراف کو روکنے قانون سازی پر زور

غیرجمہوری عمل کیخلاف عدالت سے رجوع ہونے جانا ریڈی کا اشارہ
حیدرآباد۔ 14 اپریل (این ایس ایس) کانگریس لیجسلیچر پارٹی (سی ایل پی) لیڈر کے جانا ریڈی نے آج واضح کیا کہ انحراف کے مسئلہ پر وہ عدالت سے رجوع ہوں گے۔ انہوں نے وزیراعظم نریندر مودی پر پارٹی انحراف کو روکنے کیلئے قانون سازی یقینی بنانے کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی اس معاملے میں حکمراں بی جے پی کی تائید کرے گی۔ آج گاندھی بھون میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے جانا ریڈی نے عوام سے خواہش کی کہ وہ پارٹی سے انحراف کرنے والوں کو سبق سکھائیں۔ انہوں نے کہا کہ ارکان اسمبلی اور ارکان کونسل کا ایک سے دوسری پارٹی میں انحراف غیرجمہوری ہے۔ انہوں نے یاد دلایا کہ وہ بھی تلگو دیشم پارٹی سے مستعفی ہونے کے بعد ہی کانگریس میں شامل ہوئے تھے۔ جانا ریڈی نے کہا کہ کانگریس پارٹی کبھی انحراف کی حوصلہ افزائی نہیں کرتی۔ انہوں نے یہ تجویز پیش کی کہ حکومت ایک ایسا قانون متعارف کرے جہاں ارکان اسمبلی کو انحراف پر نااہل قرار دیا جائے۔ کانگریس کے رکن اسمبلی مکتھل سی رام موہن ریڈی کے انحراف اور ٹی آر ایس میں شمولیت کو انہوں نے انتہائی سنگین قرار دیا۔ جانا ریڈی نے کہا کہ اسپیکر ایس مدھوسدن چاری نے اب تک کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا ہے حالانکہ کانگریس پارٹی نے ان سے منحرف ارکان اسمبلی کے خلاف کارروائی کی اپیل کی تھی۔ انہوں نے حکومت سے انسداد انحراف قانون میں مناسب ترمیم کا مطالبہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT