Thursday , June 29 2017
Home / ہندوستان / انسداد گاؤں کشی پر مرکزکا حکم ‘جائزہ لینے کے بعد کرناٹک حکومت کی کارروائی کا چیف منسٹر کا اعلان

انسداد گاؤں کشی پر مرکزکا حکم ‘جائزہ لینے کے بعد کرناٹک حکومت کی کارروائی کا چیف منسٹر کا اعلان

بنگلورو۔28مئی (سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی حکومت کی طرف سے کل جاری کئے گئے انسداد گئو کشی فرمان کا جائزہ لینے کے بعد ریاستی حکومت یہ طے کرے گی کہ ریاست بھر میں اسے کس طرح لاگو کیا جائے۔ یہ بات وزیر اعلیٰ سدرامیا نے کہی۔کل کے پی سی سی دفتر میں ملک کے پہلے وزیر اعظم جواہر لعل نہروکی برسی کے موقع پر منعقدہ تقریب میں حصہ لینے کے بعد اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے سدرامیا نے کہاکہ مرکزی حکومت کی طرف سے یہ فرمان جاری کیا گیا ہے کہ ملک میں کہیں بھی کھلے بازاروں میں ان مویشیوں کی فروخت کی اجازت نہیں دی جائے گی جو گائے اور اس کی نسل سے ہوں۔ اس حکم میں کہاگیا ہے کہ ملک کی سرحدوںسے 50کلومیٹر کے دائرہ میں اور ریاستوںکی سرحدوں کے 25کلومیٹر کے دائرہ میں کہیں بھی ان مویشیوں کی کھلے بازار میں فروخت کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ سدرامیا نے کہاکہ اس سلسلے میں مرکزی حکومت نے جوضوابط وضع کئے ہیں ان تمام کا جائزہ لینے کے بعد حکومت اپنا موقف ظاہر کرے گی۔ شہر میں ہوئی موسلادھار بارش سے مچی تباہی کو افسوسناک قرار دیتے ہوئے سدرامیا نے کہاکہ بارش کے سبب شہر بھر میں سینکڑوں کی تعداد میں درخت اکھڑ گئے ہیں۔ حکومت اسے روک نہیں سکتی ۔ البتہ بارش کی وجہ سے اگر کوئی جانی یا مالی نقصان ہوا ہے تو مناسب معاوضہ دینے کیلئے قدم اٹھاسکتی ہے۔اس موقع پر کے پی سی سی صدر ڈاکٹر جی پرمیشور ، کانگریس پالیمانی پارٹی لیڈر ملیکارجن کھرگے ، وزیر برائے ترقیات بنگلور، کے جے جارج، اسمبلی کے چیف وہپ اشوک پٹن وغیرہ موجود تھے۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT