Wednesday , August 23 2017
Home / ہندوستان / اودھم پور حملہ : لشکر طیبہ رکن کا لائی ڈیٹکٹر ٹسٹ

اودھم پور حملہ : لشکر طیبہ رکن کا لائی ڈیٹکٹر ٹسٹ

نئی دہلی ۔ /6 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ادھم پور دہشت گرد حملے کے سلسلے میں این آئی اے کی جانب سے گرفتار کئے گئے شوکت احمد بھٹ کو آج رات نئی دہلی لایا گیا تاکہ اس کے بیان کا سائنٹفک تجزیہ کیا جاسکے اور اسے لائی ڈیٹکٹر ٹسٹ سے گزارا جائے گا ۔ جنوبی کشمیر میں پلواما کا ساکن بھٹ کو این آئی اے نے یکم ستمبر سے اپنی تحویل میں رکھا تھا ۔ این آئی اے لشکر طیبہ کے دو عسکریت پسندوں کی جن کا تعلق پاکستان سے ہے اور جنہوں نے جموں کے اودھم پور میں بی ایس ایف بس پر حملہ کیا تھا ، تحقیقات کررہی ہے ۔ اس حملے میں دو فوجی ہلاک ہوگئے تھے ۔ ایک حملہ آور کی محمد نعمان عرف مومن کی حیثیت سے شناخت کی گئی جو جوابی فائرنگ میں ہلاک ہوگیا جبکہ ایک اور محمد نوید یعقوب کو دیہاتی عوام نے پکڑ کر پولیس کے حوالے کیا تھا ۔ شوکت احمد بھٹ کو کل عدالت میں پیش کیا جائے گا تاکہ پولی گراف ٹسٹ کی اجازت حاصل کی جائے ۔ دہشت گرد حملے کے فوری بعد وہ جموں و کشمیر پولیس کی تحویل میں تھا ۔ این آئی اے نے کہا کہ چھتیس سالہ بھٹ نے مبینہ طور پر لشکر طیبہ گروپ کے چار کارکنوں کو پاکستان سے یہاں پہونچنے پر جنوبی کشمیر پہونچایا تھا۔اس پہلے این آئی اے نے لشکر طیبہ کے خورشید احمد کو بھی گرفتار کیا جس نے دہشت گردوں کو دو مرتبہ جموں پہونچایا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT