Thursday , August 24 2017
Home / ہندوستان / اورنگ آباد اسلحہ ضبطی کیس کا نیا موڑ

اورنگ آباد اسلحہ ضبطی کیس کا نیا موڑ

ممبئی 9؍ فروری(سیاست ڈاٹ کام) اورنگ آباد اسلحہ ضبطی معاملہ میں دفاع کی جانب سے کی جانے والی حتمی بحث کے دوران آج اس وقت نیا موڑ آگیا جب جمعیۃ علماء مہاراشٹرا (ارشد مدنی) کے وکلاء دفاع نے ملزمین کے خلاف دہشت گردانہ معاملات میں سب سے اہم ثبوت مانے جانے والے اقبالیہ بیان کو ہی فرضی اور ناقابل یقین بتاتے ہوئے کہا کہ اس اقبالیہ بیان کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے اور اسے ملزمین کے خلاف استعمال نہیں کیا جا سکتا ہے اور نہ ہی اس کی بنیاد پر ملزمین کو قصور وار ٹھہرا کر انہیں سزا دی جا سکتی ہے ۔خصوصی مکوکا جج شری کانت انیکر کے رو برو حتمی بحث کے دوسرے دن سپریم کورٹ میں مجرمانہ معاملات کی پیروی کرنے والی خاتون وکیل نتیا رام کرشنن نے آج تقریباً پانچ گھنٹے بغیر مداخلت کے بحث کی اور کہا کہ انسداد دہشت گرد دستے نے ملزمین کے خلاف جو معاملہ تیار کیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT