Monday , September 25 2017
Home / شہر کی خبریں / اوور سیز اسکالر شپ اسکیم کے تحت 258 طلبا کا انتخاب

اوور سیز اسکالر شپ اسکیم کے تحت 258 طلبا کا انتخاب

97 امیدوارویٹنگ لسٹ میں ۔ دوسرے مرحلہ میں اسکالر شپ کی اجرائی ۔ 158 کا استرداد
حیدرآباد 7 اگسٹ ( سیاست نیوز ) بیرونی یونیورسٹیز میں اعلی تعلیم حاصل کرنے اقلیتی طلبا کو امداد کیلئے شروع کردہ اوور سیز اسکالرشپ اسکیم کے تحت آج ریاستی حکومت نے 258 امیدواروں کا انتخاب کرلیا ہے جنہیں حکومت 10 لاکھ روپئے تک امداد فراہم کریگی ۔ امیدواروں کے انتخاب کیلئے آج سلیکشن کمیٹی کا اجلاس صدر نشین کمیٹی جناب سید عمر جلیل سکریٹری اقلیتی بہبود کی صدارت میں منعقد ہوا جس میں امیدواروں کا انتخاب عمل میں آیا ۔ اجلاس میں کنوینر ڈائرکٹر اقلیتی بہبود جناب جلال الدین اکبر کے علاوہ جے این ٹی یو اور محکمہ ٹکنیکل ایجوکیشن کے نمائندوں نے بھی شرکت کی ۔ تفصیلات کے بموجب اس اسکیم سے استفادہ کیلئے جملہ 513 طلبا نے درخواستیں داخل کی تھیں جن کے منجملہ 258 امیدواروں کا انتخاب کرلیا گیا ہے جنہیں حکومت بیرونی یونیورسٹیز میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے 10 لاکھ روپئے اور ایک رخی کرایہ بھی ادا کریگی ۔ اس کے علاوہ 97 مزید امیدواروں کو بھی منتخب کیا گیا ہے جنہیں عملا ویٹنگ لسٹ میں رکھا گیا ہے ۔ چونکہ ان طلبا کے ابھی تک ویزے جاری نہیں ہوئے ہیں اس لئے ان طلبا کو دوسرے مرحلہ میں ماہ جنوری 2016 میں اسکالرشپ کی منظوری سے متعلق مکتوب حوالے کیا جائیگا ۔ سلیکشن کمیٹی کے اجلاس میں جملہ 158 درخواستوں کو مختلف وجوہات کی بنا پر مسترد کردیا گیا ہے ۔ جو درخواستیں مسترد کی گئی ہیں ان طلبا کا یا تو مارکس کا تناسب کم تھا یا پھر درخواستوں میں کچھ خامیاں تھیں۔ تاہم استرداد کا مطلب یہ نہیں کہ یہ طلبا آئندہ درخواست نہیں دے پائیں گے ۔ یہ طلبا دوسرے مرحلہ میں جب درخواستیں طلب کی جائیں گی دوبارہ درخواست داخل کرسکتے ہیں ۔ اس وقت تک یہ طلبا اپنی تعلیمی کارکردگی میں بہتری پیدا کرتے ہوئے درخواستوں کی خامیوں کو بھی دور کرسکتے ہیں۔ جن 158 درخواستوں کو مسترد کیا گیا ہے ان میں تقریبا 50 تا 60 درخواستیں ایسے طلبا کی ہیں جو بارہا توجہ دہانی کے باوجود بھی خود دستاویزات کی تنقیح وغیرہ کیلئے حاضر نہیں ہوئے ۔ جن 258 طلبا کا اوورسیز اسکالرشپ اسکیم کے تحت انتخاب عمل میں آیا ہے انہیں دو مراحل میں پانچ پانچ لاکھ جملہ دس لاکھ روپئے ادا کئے جائیں گے ۔ طلبا کو اپنے خرچ پر بیرونی جامعات میں داخلہ حاصل کرنا ہوگا ۔ جب طلبا اپنا اڈمیشن کارڈ اور بورڈنگ کارڈ آن لائین محکمہ اقلیتی بہبود کو روانہ کرینگے تو انہیں ایک طرف کا فضائی کرایہ اور پانچ لاکھ روپئے کی پہلی قسط اسکالرشپ ادا کی جائیگی ۔ یہ رقم طلبا کے بینک اکاؤنٹس میں منتقل کردی جائیگی ۔ پہلے مرحلہ میں حکومت کو جملہ 258 طلبا کو پہلی قسط اور یکطرفہ فضائی کرایہ کی ادائیگی پر جملہ 12 کروڑ 90 لاکھ روپئے کے اخراجات آئیں گے ۔ حکومت نے اس اسکیم کیلئے جملہ 25 کروڑ روپئے کا بجٹ مختص کیا تھا ۔ فہرست telanganaepass.ccg.gov.in پر ملاحظہ کی جاسکتی ہے ۔ طلبا کو بذریعہ ایس ایم ایس بھی اطلاع دی جا رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT