Sunday , September 24 2017
Home / Top Stories / اوپنین پول… پیسہ کا کھیل سماج وادی پا رٹی کے بارے میں پیش قیاسی پر اعظم خاں کا ردعمل

اوپنین پول… پیسہ کا کھیل سماج وادی پا رٹی کے بارے میں پیش قیاسی پر اعظم خاں کا ردعمل

سمبھل ۔ 21 ۔ مارچ (سیاست ڈاٹ کام) حالیہ ایک اوپنین پول میں یہ پیش قیاسی کئے جانے پر اترپردیش میں فی الفور اسمبلی انتخابات منعقد کروائے گئے تو سماج وادی پارٹی اقتدار سے بیدخل ہوجائے گی ۔ سینئر پارٹی لیڈر اور وزیر شہری ترقیات اعظم خاں نے یہ دعویٰ کیا کہ اس طرح کے سروے محض ایک پیسہ کا کھیل ہے ۔ مسٹر اعظم کے کل یہاں ایک شمارہ کی تقریب کے دوران میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ یہ سب کچھ پیسہ کا کھیل ہے جو کوئی بھی پیسے خرچ کرے گا اپنے حق میں انتخابی نتائج حاصل کرے گا۔ اگر ہم بھی کسی کو پیسے دیں گے تو ہمارے حق میں نتائج حاصل ہوں گے۔ ایک خانگی نیوز چیانل کے زیر اہتمام اوپنین پول میں یہ دعویٰ کیا گیا ہے ۔ اگر ریاست میں فی الفور انتخابات کروائے جائیں تو بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی برسر اقتدار آجائے گی ۔ ان کی پا رٹی کو 185 نشستوں پر کامیابی اور حکمراں سماج وادی پارٹی 80 نشستوں تک گھٹ جائے گی۔ سال 2012 ء کے اسمبلی انتخابات میں حکمراں جماعت نے 403 رکنی اسمبلی میں 228 نشستوں پر کامیابی حاصل کی تھی اور اپنی حر یف بی ایس پی کو شکست دیکر عددی طاقت کو 80 تک گھٹا رہا تھا ۔ اوپنین پول کے نتائج پر سوالیہ نشان لگاتے ہو ئے اعظز خاں نے کہا کہ اترپردیش جیسی وسیع ریاست میں ایک سال قبل ہی 1700 افراد کو رائے معلوم کر کے یہ فیصلہ کیسے کیا جائے گا کہ کونسی جماعت اقتدار میں آئیگی اور کسی جماعت کو کتنی نشستیں حاصل ہوں گے یہ اعتماد ظآہر کرتے ہوئے کہ 2017 ء کے ا سمبلی انتخابات میں سماج وادی پا رٹی شاندار کامیابی حاصل کرلے گی ۔ وزیر موصوف نے کہا کہ ہماری حکومت کا مزید ایک سال باقی ہے اور مزید 5 سال کیلئے اقتدار حصل کرتے ہوئے حکمرانی کا سلسلہ جاری رہے گی۔ انہوں نے کہاکہ سماج وادی پارٹی سے انتخابی منشور کے مقابل وعدوں کی تکمیل کرلی ہے ۔ ریاست میں گزشتہ 3 سال سے خشک سال ہے اور حکومت نے کسانوں کو درخت (معاوضہ) فراہم ہے جبکہ کسانوں کیلئے مرکز کی امداد کا اعلان جھوٹا ثابت ہوا ہے جس نے اب تک فنڈس جاری نہیں کئے ہیں۔ واضح رہے کہ مرکزی حکومت نے 6 جنوری کو خشک سالی سے متاثرہ ریاستوں اترپردیش ، آندھراپردیش اور اڈیشہ کیلئے 2550 کروڑ کی گرانٹ منظور کی تھی۔

TOPPOPULARRECENT