Saturday , May 27 2017
Home / ہندوستان / اُپہار کیس : گوپال کو ایک سال قید بھگتنے سپریم کورٹ کی ہدایت

اُپہار کیس : گوپال کو ایک سال قید بھگتنے سپریم کورٹ کی ہدایت

نئی دہلی ۔ 9 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے آج ریئل اسٹیٹ بزنسمین گوپال انسل کو 1997ء کے اپہار آتشزدگی واقعہ کے سلسلہ میں جس میں 59 افراد ہلاک ہوئے تھے، ایک سالہ قید بھگتنے کی ہدایت دی۔ فاضل عدالت نے 2:1 کے اکثریتی فیصلہ میں گوپال سے کہا کہ اندرون چار ہفتے خودسپرد ہوجائے تاکہ ایک سالہ سزاء کی بقیہ جیل میعاد کی جاسکے۔ تاہم فاضل عدالت نے بڑے بھائی سشیل انسل کو ان کی ضعیف العمری کو ملحوظ رکھتے ہوئے راحت دی اور وہی سزائے قید سنائی جو پہلے ہی بھگت چکے ہیں جس میں سزاء میں تخفیف شامل ہے۔ جسٹس رنجن گوگوئی اور جسٹس کورین جوزف کے معلنہ اکثریتی فیصلہ میں کہا گیا کہ فاضل عدالت کی جانب سے قبل ازیں سشیل انسل اور گوپال انسل پر عائد فی کس 30 کروڑ روپئے کا جرمانہ حد سے زیادہ نہیں ہے۔ اکثریتی فیصلہ جسٹس گوگوئی اور جسٹس جوزف نے جاری کیا جبکہ جسٹس آدرش کمار گوئل اقلیت میں رہے۔ فاضل عدالت نے یہ فیصلہ سی بی آئی اور متاثرین کی تنظیم کی داخل کردہ عرضیوں پر کیا ہے۔ درخواست گذاروں نے اس کیس میں 2015ء کے فیصلہ پر نظرثانی چاہی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ سشیل انسل اور گوپال انسل فی کس 30 کروڑ روپئے کا جرمانہ ادا کرنے میں ناکام ہوتے ہیں تو دو سالہ سزائے قید بھگتیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT