Wednesday , August 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / آئس لینڈ کے مقابل انگلینڈ کو صدمہ انگیز شکست

آئس لینڈ کے مقابل انگلینڈ کو صدمہ انگیز شکست

نائس ، 28 جون (سیاست ڈاٹ کام) یورو کپ 2016ء میں آئس لینڈ نے اعصاب شکن مقابلے میں انگلینڈ کو 2-1 سے شکست دے کر ایونٹ سے باہر کردیا۔ فرانس میں جاری یورو کپ کے ناک آؤٹ مرحلے کے دوشنبہ کو تیسرے روز انگلش کلب مانچسٹر یونائٹیڈ کے اسٹرائیکر وین رونی کی قیادت میں انگلش ٹیم ناک آؤٹ مرحلے میں آئس لینڈ کے مدمقابل نظر آئی۔ انگلینڈ نے میچ کا شاندار آغاز کیا اور چوتھے منٹ میں ہی رونی نے پنالٹی اسٹروک پر گیند کو جال کی راہ دکھا کر آئس لینڈ کے خلاف 1-0 کی برتری دلادی۔ تاہم انگلینڈ کی برتری زیادہ دیر تک برقرار نہ رہ سکی اور 2 منٹ بعد ہی آئس لینڈ کے رایگنر سگورڈسن نے قریبی فاصلے سے گیند کو گول پوسٹ میں پہنچا دیا، اس طرح میچ 1-1 سے برابری پر آگیا۔ انگلش ٹیم ابھی آئس لینڈ کے کھلاڑیوں کے حملوں سے سنبھل ہی نہیں پائی تھی کہ 18 ویں منٹ میں آئس لینڈ کے کوبین سگوتھروسن نے عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ٹیم کو 1-2 سے سبقت دلائی۔ دوسرے ہاف میں آئس لینڈ نے منیجر رائے ہاجسن کی انگلش ٹیم کی ایک نہ چلنے دی اور میچ کے اختتام تک انگلینڈ کو گول کرنے سے محروم رکھا۔ انگلش منیجر نے آئس لینڈ کو قابو کرنے کیلئے کئی متبادل کھلاڑیوں کو بھی میدان میں اتارا لیکن وہ بھی انگلینڈ کو شکست سے نہ بچاسکے۔ میچ کے اختتام کے بعد انگلش کپتان رونی نے آئس لینڈ کے خلاف شکست کو تاریخ کا ’سیاہ دن‘ قرار دیا۔ انھوں نے کہا کہ بہترین ٹیم ہمیشہ نہیں جیت پاتی، جب حریف ٹیم آپ پر سبقت حاصل کرلے تو میچ کا اسکور برابر کرنا بہت مشکل ہوتا ہے کیونکہ حریف ٹیم اْس وقت منظم ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آخری 16 والے میچ میں آئس لینڈ کے مقابلے کیلئے پُراعتماد تھے، ہم جیت سکتے تھے لیکن شکست سے سخت مایوسی ہوئی ہے۔

 

آئس لینڈ سے شکست پرانگلش کوچ ہاجسن مستعفی
نائس ، 28 جون (سیاست ڈاٹ کام) انگلینڈ فٹبال ٹیم کے کوچ روئے ہاجسن یورو 2016ء کے ناک آؤٹ مرحلے میں آئس لینڈ کے مقابل صدمہ انگیز شکست کے بعد اپنے عہدہ سے مستعفی ہوگئے۔ ہاجسن نے میچ کے بعد پریس کانفرنس میں عہدہ چھوڑنے کا اعلان کیا۔ 68 سالہ ہاجسن نے چارسال قبل اٹلی کے فیبیو کیپیلو کے بعد انگلش ٹیم کی ذمہ داریاں سنبھالی تھیں لیکن بڑے مقابلوں میں وہ 11 میچوں میں سے صرف 3 میں کامیابی دلاسکے۔ انگلش ٹیم کے کھلاڑیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ’’ہم یورو سے باہر ہیں، اب وقت آگیا ہے کوئی اور اُن باصلاحیت اور بہتری کیلئے بے تاب کھلاڑیوں کی نگرانی کرے، میری اس عہدہ پر مزید دو سال ٹھہرنے کی آرزو تھی لیکن یہ وقت کسی اور کے ذمہ داری لینے کا ہے‘‘۔ انگلینڈ کی ٹیم یورو کپ 2016 کے گروپ بی میں شامل تھی جہاں اس نے دوسری پوزیشن ملی۔ ہاجسن کے ساتھ ساتھ دیگر کوچنگ اسٹاف گیری نیول اور رے لیونگٹن بھی اپنے عہدے چھوڑ رہے ہیں۔ ہاجسن کی نگرانی میں انگلینڈ  نے کوالیفائرز میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا اور یورو 2016ء میں پہنچنے کیلئے 10 میچوں میں کامیابی سمیٹی لیکن اہم ایونٹ کے 11 میچوں میں سے صرف 3 جیت پائی۔ انگلینڈ کو 2012 کے یورو کپ کے کوارٹرفائنل میں پنالٹی شوٹ پر اٹلی کے مقابل شکست ہوئی تھی، جبکہ ورلڈ کپ 2014ء میں اسے کوئی میچ جیتے بغیر گروپ مرحلے سے ہی واپس لوٹنا پڑا تھا۔ ہاجسن کی کوچنگ میں انگلینڈ نے مجموعی طورپر 56 میچز کھیلے جن میں 33 میں کامیابی اور 8 میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا جبکہ اُن کی ٹیم نے اس دوران 109 گول کئے اور ان کے خلاف 44 گول کئے گئے۔

TOPPOPULARRECENT